آرمی ایکٹ میں ترمیم کے بل کا مسودہ منظر عام پر آ گیا ، آرمی چیف کے علاوہ کس اعلیٰ شخصیت کو تین سال تک کی توسیع دی جا سکتی ہے ؟ بڑی خبر آ گئی

آرمی ایکٹ میں ترمیم کے بل کا مسودہ منظر عام پر آ گیا ، آرمی چیف کے علاوہ کس ...
آرمی ایکٹ میں ترمیم کے بل کا مسودہ منظر عام پر آ گیا ، آرمی چیف کے علاوہ کس اعلیٰ شخصیت کو تین سال تک کی توسیع دی جا سکتی ہے ؟ بڑی خبر آ گئی

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ کی مدت ملازمت میں توسیع کیلئے حکومت نے آرمی ایکٹ میں ترمیم کیلئے بل کا مسودہ تیار کر لیاہے جس کی منظوری گزشتہ روز کابینہ اجلاس میں دیدی گئی تھی تاہم اب اسے قومی اسمبلی میں پیش کیا جائے گا جس کی کاپی منظر عام پر آ گئی ہے ۔

نجی ٹی وی جی این این نیوز کے مطابق بل کے مسودے میں کہا گیاہے کہ بل کو پاکستان آرمی ایکٹ ترمیمی بل 2020 کانام دیا گیاہے ، بل میں آرمی ایکٹ میں ایک نئے باب کا اضافہ کیا گیاہے ، نئے چیپٹر کو آرمی چیف اور چیئرمین جوائنٹ چفس آف سٹاف کی تعیناتی کا نام دیا گیاہے ، بل میں آرمی چیف کی تعیناتی کی مدت میں تین سال مقرر کی گئی ہے ، آرمی چیف کی مدت ملازمت پوری ہونے پر تین سال کی توسیع دی جاسکے گی ۔

بل کے مسودے کے مطابق آرمی چیف کی نئی تعیناتی یا توسیع وزیراعظم کی مشاورت پر صدر کریں گے ، وزیراعظم کی ایڈوائس میں وسیع تر قومی مفاد ، ہنگامی صورتحال کا تعین کیا جائے گا ،اگر چیئرمین جوائنٹ چیفس پاک فوج سے ہواتو بھی اسی قانون کا اطلاق ہو گا ، چیئرمین جوائنٹ چیفس آف سٹاف کمیٹی کو بھی تین سال کی توسیع دی جا سکے گی،وزیراعظم زیادہ سے زیادہ تین سال اور اس سے کم مدت کی سفارش بھی کر سکتے ہیں آرمی چیف پر جنرل کی مقرر کردہ ریٹائر منٹ کی عمر کا اطلاق نہیں ہو گا،مدت تعیناتی کے دوران ریٹائرمنٹ کی عمر آنے پر بھی آرمی چیف رہیں گے ۔

مزید : اہم خبریں /قومی


loading...