ای ڈی ایل کی اسلا م مخالف ریلی میں نسل پرستوں کی شرکت

ای ڈی ایل کی اسلا م مخالف ریلی میں نسل پرستوں کی شرکت

 ڈیوزبری(جی این آئی )انتہا پسندبرطانوی گروپ ای ڈی ایل کی جانب سے ڈیوزبری میں منعقد کی گئی اسلام مخالف ریلی میں نسل پرستوں ا ور مسلم مخالفین کی بڑی تعداد نے شرکت کی اس موقع پر پولیس نے آخری اطلاعات آنے تک ایک فرد کو ہنگامہ آرائی کے الزام میں گرفتار کیا تھا قبل ازیں برطانیہ بھر سے اسلام اور مسلمان مخالف نسل پرست ڈیوزبری کے ٹرین اسٹیشن پر جمع ہوئے جہاں ان کی اکثریت کوچز کے ذریعے دیگر شہروں سے پہنچی تھی ڈیوزبری سے ممبران پارلیمنٹ بشمول سپن اینڈ باٹلے کے ایم پی مائک ووڈ نے ریلی کے انعقاد پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا کہ اس قسم کی سرگرمیوں کی اجازت نہیں ہونی چاہئے چونکہ ای ڈی ایل کی گزشتہ ریلی کے دوران اور بعد میں ڈیوزبری اور گرد و نواح کے علاقوں میں امن و امان کا مسئلہ پیدا ہوگیاتھا ایم پیز نے مزید کہاکہ ریلی کے منفی اثرات کافی دنوں تک برقرار رہیں گے ریلی کے دوران دکانوں پر حملے کئے اور پبلک ٹرانسپورٹ میں مسائل کا سامنا کرنا پڑا ۔ دریں اثنا ڈیوزبری میں فاشزم کے خلاف جدوجہد کرنے والے ایک گروپ نے بھی پچھلے پہر فاشزم مخالف ریلی منعقد کرنے کا اعلان کررکھا ہے سابق کونسلر خضر اقبال نے اس موقع پر کہا کہ ڈیوزبری کے لوگوں کو نسل پرستی اور دہشت گردی کے خلاف متحد ہوکر کھڑا ہونا ہوگا یہ شہر پہلے ہی کئی مسائل کا شکار ہے جس کا سبب مسلمان نہیں بلکہ دیگر پالیسیاں ہیں ای ڈی ایل کا ڈیوز بری کو فوکس کرنا اور ملک بھر سے نفرت کا پرچار کرنے والوں کو اکٹھا کرنا لمحہ فکریہ ہے ۔

مزید : عالمی منظر


loading...