عوام میں شعور بیدار ہونے سے ہی انقلاب ممکن ہے، میاں ادریس حنیف

عوام میں شعور بیدار ہونے سے ہی انقلاب ممکن ہے، میاں ادریس حنیف

لاہور(ج الف) روز نامہ پاکستان کے مقبول عام سلسلہ” ینگ لیڈر“ میں ہمارے آج کے مہمان ضلع لاہور کے سابق نائب ناظم میاں ادریس حنیف ہیں، میاںادریس حنیف کا تعلق لاہور کے سیاسی گھرانے سے ہے انہوںنے اس سلسلہ میں اپنے انٹرویو میں کہا کہ پاکستان کا سب سے بڑا مسئلہ عوام میں شعور کا فقدان اور اس کے ذمے دار پاکستان کی عام سیاسی جماعتوں کی قیادت ہے جنہوںنے عوام میں شعور بیدار ہونے دیا ہے نہ تعلیم کو عام ہونے دیا ہے ، پاکستان کا مستقبل نوجوان نسل سے وابستہ ہے ۔یوتھ عوام سے مل کر تبدیلی لائے گی اور انقلاب کے لئے عوام میں ان کے حقوق اور حق کا شعور آنا ضروری ہے ورنہ کوئی تبدیلی نہیں آئے گی۔ آئندہ اقتدار کا سہرا کس کے سر ہو گا ۔ اس کا فیصلہ عوام کریں گے۔ اور اس مقصد کے لئے ووٹ استعمال کو قومی شناختی کارڈ کی طرح ضروری قرار دینا ہوگا، عام سیاستدانوں کی طرح ضلعی حکومتیں بھی عوام میں شعور بیدار کرنے میں ناکام رہی ہیں۔ ادریس حنیف نے کہا کہ ضلعی حکومتیں جمہوریت میں رکاوٹیں ضرورتھیں مگر ان کا سب سے بڑا کام عوام میں شعور بیدار کرناتھا اس مقصد میں ضلعی حکومتیں بری طرح ناکام ہوچکی ہیں۔انہوںنے کہا کہ زندہ باد مردہ باد کا کلچر ختم کرنا ہوگا یہ اس وقت ممکن ہوگا جب عوام میں شعور آئے گا اور عمل تعلیم عام ہوگی۔ ہمارے ہاں کلچر بن چکا ہے کہ کوئی گلی یا سڑک تعمیر کرادی جائے تو عوام شکریہ کے بینرز آویزاں کردیتے ہیں حالانکہ مشکور تو لیڈر کو ہوناچاہئے جسے عوام نے اس قابل کیا۔ ہمارے ہاں تعلیم اقتدار کا دوسرا نظام راج ہے جس طرح عوام سیاست میں تقسیم ہیں اس طرح تعلیم میں بھی تقسیم کردیا گیا ہے۔ غریب کا بچہ ٹاٹ پر اور امیر کا بچہ ائیر کنڈیشنڈ سکولوں میں ایسا ہرگز نہیں ہونا چاہئے۔تبدیلی لانے کے لئے امیر غریب کے بچے کو یکساں تعلیم کے مواقع مہیا کرنا ہونگے ایک نصاب لانا ہوگا۔ ہمارے ہاں کیسے تبدیلی آئے گی جب مذہب اور سائنس کو الگ الگ کردیا گیا ہے۔ ان تمام مسائل سے نجات حاصل کرکے ہی ہم اپنے ملک شہر اور گھر میں تبدیلی لاسکتے ہیں۔ ایک اور سوال کے جواب میں ادریس حنیف نے کہا کہ آئندہ اقتدار میں کون آئے گا۔ اس کا فیصلہ عوام کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ میری تجویز ہے کہ حکومت اگر حقیقی تبدیلی لانا چاہتی ہے تو اس کے لئے جیسے ہر شخص کا قومی شناختی کارڈ بنانا ضروری ہے اسی طرح ہر شہری کے لئے حق رائے دینا استحصال کرنا بھی ضروری ہونا چاہئے۔ انہوںنے کہا کہ ملک کے موجودہ مسائل اور بحرانوں کی ذمہ دار تو کو ئی ایک پارٹی یاڈکٹیٹر نہیں سب حصے دار ہیں تحریک انصاف تبدیلی لا سکے گی یا نہیں اس کا فیصلہ آنے والا وقت کرے گا۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...