روایتی حریف پاکستان میں بھارت انڈر 19ایشیا کرکٹ کپ کے مشترکہ فاتح

روایتی حریف پاکستان میں بھارت انڈر 19ایشیا کرکٹ کپ کے مشترکہ فاتح

  



کوالالمپور(نیٹ نیوز) پاکستان اور بھارت کے درمیان انڈر 19 ایشیاکرکٹ کپ 2012ءکا فائنل انتہائی دلچسپ اور اعصاب شکن مقابلے کے بعد برابر ہوگیا، میچ کا فیصلہ آخری اوور کی آخری گیند پر ہوا، گرین شرٹس نے پہلے کھیلتے ہوئے مقررہ 50 اوورز میں 9 وکٹوں کے نقصان پر 282 رنز بنائے، سمیع اسلم نے 134 رنز کی دلکش اننگز کھیلی، رش کلاریا نے 5 وکٹیں حاصل کیں۔ جواب میں بھارتی ٹیم نے بھی مقررہ 50 اوورز میں 8 وکٹوں کے نقصان پر 282 رنز بنائے، کپتان انمکت چاند نے شاندار بیٹنگ کا مظاہرہ کیا اور 121 رنز بنائے، بابا اپاراجیت 90 رنز کے ساتھ دوسرے نمایاں بلے باز رہے۔ ٹورنامنٹ کے قوانین کے مطابق دونوں ٹیموں کو مشترکہ طور پر ایشیا کپ کا فاتح قرار دیا گیا، انمکت چاند اور سمیع اسلم کو مشترکہ طور پر میچ کے بہترین کھلاڑی کا ایوارڈ دیا گیا، ٹورنامنٹ کے بہترین کھلاڑی کا ایوارڈ بھی سمیع اسلم کے نام رہا۔ اتوار کو ملائیشیا کے دارالحکومت کوالالمپور میں کھیلے گئے ایونٹ کے فائنل میں بھارت کے کپتان انمکت چاند نے ٹاس جیت کر پہلے فیلڈنگ کا فیصلہ کیا، پاکستان نے سمیع اسلم کی شاندار سنچری کی بدولت مقررہ 50 اوورز میں 9 وکٹوں کے نقصان پر 282 رنز بنائے، سمیع اسلم نے جارحانہ بیٹنگ کا مظاہرہ کیا اور بھارتی باﺅلرز کو گراﺅنڈ کے چاروں طرف دلکش سٹروکس کھیلے۔ انہوں نے 3 چھکوں اور 13 چوکوں کی مدد سے 124 گیندوں پر 134 رنز بنائے، عمر وحید 48 رنز کے ساتھ دوسرے نمایاں بلے باز رہے۔ کپتان بابر اعظم 10 ، امام الحق 10 ، محمد نواز 13 اور سعد علی 23 رنز بناکر آﺅٹ ہوئے۔ بھارت کی طرف سے رش کلاریا سب سے کامیاب باﺅلر رہے انہوں نے 37 رنز کے عوض 5 کھلاڑیوںکو پویلین کی راہ دکھائی۔ جواب میں بھارتی ٹیم نے بھی شاندار کھیل پیش کیا اور مقررہ 50 اوورز میں 8 وکٹوں کے نقصان پر 282 رنز بناکر میچ برابر کر دیا، کپتان انمکت چاند نے ایک مرتبہ پھر کپتان اننگز کھیلی اور 121 رنز کی شاندار اننگز کھیل کر اپنی ٹیم کو جیت کے قریب لے آئے تاہم آخری اوور میں احسان عادل کی گیند پر آﺅٹ ہوگئے، بابا اپاراجیت 90 رنز کے ساتھ دوسرے نمایاں بلے باز رہے۔ بھارت کو جیت کے لئے آخری گیند پر ایک رن درکار تھا مگر رش کلاریا احسان عادل کی گیند پر کیچ آﺅٹ ہوگئے اس طرح میچ برابر ہوگیا۔ پاکستان کی طرف سے احسان عادل اور محمد نواز نے تین تین وکٹیں حاصل کیں۔ ٹورنامنٹ کے قوانین کے مطابق دونوں ٹیموں کو مشترکہ طور پر فاتح قرار دے دیا گیا۔ بھارت کے انمکت چاند اور پاکستان کے سمیع اسلم کو مشترکہ طور پر بہترین کھلاڑی کا ایوارڈ دیا گیا۔ ٹورنامنٹ کے بہترین کھلاڑی کا ایوارڈ بھی سمیع اسلم کو دیا گیا۔

مزید : صفحہ اول


loading...