چیف الیکشن کی تقرری دونوں بڑی جماعتوں کےد رمیان رواں ہفتے مذاکرات ہونگے

چیف الیکشن کی تقرری دونوں بڑی جماعتوں کےد رمیان رواں ہفتے مذاکرات ہونگے

اسلام آباد (ثناءنیوز ) چیف الیکشن کمشنر کی تقرری کے لیے دونوں بڑی جماعتوں کی مذاکراتی ٹیموں کے درمیان رواں ہفتے مذاکرات ہونگے۔ اپوزیشن کی بڑی جماعت صاف شفاف منصفانہ و غیر جانبدارانہ انتخابا ت کے لیے نگران حکومت کا معاملہ اٹھائے گی۔ اپوزیشن اسی سال انتخابات کے لیے حکومت پر دباﺅ ڈالے گی۔ پاکستان مسلم لیگ(ن) کے حکومتی اتحادی جماعتوں سے بھی بلا واسطہ رابطے ہوئے ہیں۔ذرائع نے دعوی کیا ہے کہ بعض رہنماءحکومت اور اپوزیشن کے درمیان تعلقات کار کی بحالی کے لیے سرگرم ہیں۔صاف شفاف انتخابات کے انعقاد کو یقینی بنانے کے لیے پاکستان مسلم لیگ(ن) کی جانب سے بھی حکومت سے بات چیت کا عندیہ دیا جا رہا ہے۔و زیر اعظم راجہ پرویز اشرف اور قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف چودھری نثار علی خان کے درمیان براہ راست بات چیت کے نتیجہ میں چیف الیکشن کمشنر کی نامزدگی کے لیے دونوں بڑی جماعتوں کی مذاکراتی ٹیموں کو یہ اہم ٹاسک سپرد کیا جائے گا۔ بعد ازاں مشاورت کے دائرے کو وسیع کر دیا جائےگا۔ بات چیت کو چیف الیکشن کمشنر کی نامزدگی تک محدود رکھا جائے گا جبکہ دیگر مسائل بشمول عدلیہ کی آزادی و خود مختاری کے تحفظ کے معاملے پر اپوزیشن حکومت کے ساتھ اپنے سخت اور جارحانہ روپے کو برقرار رکھے گی۔

مزید : صفحہ آخر


loading...