ایم ایس نشتر کیس کی سماعت 15اکتوبر تک ملتوی سیکرٹری ہیلتھ اور دیگر حکام سے کمنٹس طلب

ایم ایس نشتر کیس کی سماعت 15اکتوبر تک ملتوی سیکرٹری ہیلتھ اور دیگر حکام سے ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


ملتان (خبر نگار خصوصی)ہائی کورٹ ملتان بینچ کے جج مسٹر جسٹس فیصل زمان خان نے ایم ایس نشتر ہسپتال ڈاکٹر عشق حسین ملک کو ڈیپارٹمنٹل پروموشن کمیٹی کی لسٹ سے ڈراپ کرنے اور دو(بقیہ نمبر51صفحہ12پر)

ایسے ڈاکٹروں کو ترقی دینے جن کے خلاف پیڈا ایکٹ اور فوجداری مقدمات کے تحت کاروائی جاری ہے بارے درخواست پر ابتدائی سماعت کے بعد حکومت پنجاب بذریعہ ہیلتھ سیکرٹری، صوبائی سیکرٹری پرائمری ہیلتھ، سیکرٹری سپیشلائزڈ ہیلتھ اور چیئرمین پروفیشنل سلیکشن بورڈ کو نوٹس جاری کرتے ہوئے پیرا وائز کمنٹس طلب کر لیے ہیں اور درخواست پر سماعت 15 اکتوبر تک ملتوی کردی ہے۔ فاضل عدالت میں میں ایم ایس نشتر ہسپتال ڈاکٹر عاشق حسین ملک کے وکیل بیرسٹر ریحان خالد جوئیہ نے درخواست دائر کرتے ہوئے موقف اختیار کیا کہ ان کے مؤکل کو ناموزوں امیدوار قرار دے کر پروموشن لسٹ سے ڈراپ کردیا گیا جبکہ اپنے من پسند،غیر مستحق اور مختلف مقدمات میں ملوث ڈاکٹرز کو 20 ویں سکیل میں ترقی دے دی گئی، مزید موقف اختیار کیا کہ ترقی کی لسٹ میں شامل ہونے والے ڈاکٹر رفیق اختر کے خلاف پیڈا ایکٹ کے تحت کارروائی جاری ہے اسی طرح ڈاکٹر شاہد محمود کے خلاف بھی مختلف الزامات کے تحت کاروائی جاری ہے لیکن سلیکشن بورڈ نے ان کی ترقی کی سفارش کردی ہے۔۔
طلب