اردوکی سب سے زیادہ بہتر خدمت اہل پنجاب نے کی ہے،پیرزادہ قاسم

اردوکی سب سے زیادہ بہتر خدمت اہل پنجاب نے کی ہے،پیرزادہ قاسم

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


کراچی (پ ر)اْردو زبان وا دب کی زیادہ بہتر اور معتبر خدمت اہل پنجاب نے کی ہے۔ اس ناطے سے بلاشبہ اْنہیں سبقت حاصل ہے۔ ہمیں چاہیئے کہ ہم اْن کی رہنمائی وسرکردگی میں آگے کا سفرطے کریں۔ ان خیالات کا اظہار پروفیسرڈاکٹر پیرزادہ قاسم رضا صدیقی سابق وائس چانسلر کراچی یونیورسٹی، فیڈرل اردو یونیورسٹی اور حال ضیاء الدین یونیورسٹی نے تحریک نفاذ اْردو پاکستان کی 173 ویں شام میں اپنے صدارتی خطاب میں کیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ آج ایک چھت کے تلے اہل علم وادب و دانش کی کہکشاں موجود ہے۔ پیرزادہ قاسم رضا نے اردو زبان و ادب کے حوالے سے قائد اعظم رائٹرز گلڈ اور تحریک نفاذ اْردو کی کوششوں اور کاوشوں پر جلیس سلاسل اور نسیم شاہ کی خدمات کو بھی سراہا۔ قبل ازیں تحریک نفاذ اردو کے صدر نسیم شاہ ایڈوکیٹ نے اپنے افتتاحی خطاب میں کہا کہ تحریک کی یہ تقریب سپاس قائد اعظم رائٹرز گلڈ کے تحت ڈاکٹر عبدالقدیرخان بْکس ایوارڈز یافتگان کے اعزاز میں ترتیب دی گئی ہے۔ واضح رہے کہ ابھی کچھ عرصہ قبل ڈاکٹر عبدالقدیرخان نے کراچی یونورسٹی میں منعقدہ رائٹرزگلڈ کی ایک تقریب میں پچاس کے قریب اہل علم و قلم میں خود اپنے دست مبارک سے ان کی بہترین کتب پر ایوارڈز تقسیم کیئے تھے۔ تقریب سے ممتاز محقق خواجہ رضی حیدر نے بحیشیت مہمان خصوصی اور گلڈ کی ایوارڈز کمیٹی کے چئرمین ڈاکٹر شکیل الرحمان فاروقی نے بحیشیت مہمان اعزازی خطاب کیا۔ گلڈ کے صدرخلیل احمد خلیل اور جلیس سلاسل نے بھی اظہارخیال کیا۔۔ جوایوارڈزیافتگان اصل تقریب میں بوجوہ اپنیایوارڈز وصول نہیں کر سکے تھے ڈاکٹر پیرزادہ قاسم رضا نے اپنے دست مبارک سے اْن میں ایوارڈزتقسیم کیئے۔ خواجہ رضی حیدر اور ڈاکٹر شکیل فاروقی نے مشترکہ طورپر ڈاکٹرقاسم پیرزادہ کی خدمت میں " ڈاکٹرعبدالقدیرخان سے منسوب ماڈل ایوارڈ پیش کیا۔ تلاوت کی سعادت پروفیسراسحاق منصوری نے حاصل کی جبکہ نظامت کے فرائض معروف صحافی صائمہ نفیس نے ادا کیئے۔ تقریب میں بڑی تعداد میں معروف وممتاز اہل علم و قلم نے شرکت کی جن میں ڈاکٹر حفیظ الرحمان صدیقی، ڈاکٹر عزیزاحسن، ڈاکٹرمعین الدین احمد، انورسعید صدیقی، پروفیسراسحاق منصوری، رضی الدین سید، ڈاکٹرشوکت اللہ جوہر، پروفیسرخیال آفاقی، پروفیسرشاہین حبیب، نسیم انجم و دیگرشامل تھے۔