جنوبی پنجاب کے لئے الگ سیکرٹریٹ، مگر؟

جنوبی پنجاب کے لئے الگ سیکرٹریٹ، مگر؟

  

جنوبی پنجاب صوبہ کے قیام کی طرف پنجاب حکومت کی طرف سے پیش قدمی کا دعویٰ کرتے ہوئے وزیراعلیٰ پنجاب نے کہاجنوبی پنجاب کے لئے علیحدہ سیکرٹریٹ کے قیام کی باقاعدہ منظوری دے دی گئی ہے اور اس کے لئے فنڈز بھی مختص کر دیئے گئے ہیں۔ وزیراعلیٰ سردار عثمان بزدار نے صوبائی بجٹ کی منظوری کے بعد پنجاب اسمبلی کے اجلاس میں خطاب کرتے ہوئے بتایا کہ جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے لئے ڈیڑھ ارب اور جنوبی پنجاب کے ترقیاتی کاموں کے لئے بجٹ میں 33فیصد رقم مختص کر دی گئی ہے، جو کسی اور مد میں خرچ نہیں کی جا سکے گی۔ وزیراعلیٰ نے چیف سیکرٹری پنجاب اور انسپکٹر جنرل پولیس پنجاب کے ساتھ مشاورت اور ان کی سفارش پر زاہد اختر زمان کو ایڈیشنل چیف سیکرٹری اور انعام غنی کو ایڈیشنل انسپکٹر جنرل پنجاب تعینات کرنے کی منظوری دے دی،ان کی تقرری کا نوٹیفکیشن جاری کیا جا رہا ہے۔وزیراعلیٰ عثمان بزدار کے مطابق تحریک انصاف نے جنوبی صوبے کی طرف یہ ایک اہم قدم اٹھایا ہے، جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے قیام اور جنوبی پنجاب کے لئے ترقیاتی فنڈز مختص کرنے کا اعلان بلاشبہ ایک اہم اقدام ہے لیکن جہاں تک نئے صوبے کے قیام کا تعلق ہے، ہنوز دلی دور است ہے۔ نئے صوبے(یا صوبوں) کی تشکیل کے لیے بڑی سیاسی جماعتوں میں اتفاق ضروری ہے،جب تک اس حوالے سے پیش قدمی نہیں ہو گی، دعوؤں اور وعدوں کا کوئی نتیجہ نہیں نکلے گا۔

مزید :

رائے -اداریہ -