جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ سے صنعتی ترقی میں تیزی آئے گی، جلال الدین رومی

  جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ سے صنعتی ترقی میں تیزی آئے گی، جلال الدین رومی

  

ملتان (نیوز رپورٹر) جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کا فیصلہ نہ صرف تاریخ ساز ھے بلکہ اس کے قیام کے اثرات یہاں کی عوام کیلئے دوررس ھوں گے وزیر اعظم عمران خان اور وزیر اعلی سردارعثمان بزدار کا اقدام تاریخ میں ھمشیہ زندہ رھے گا کہ پاکستان بننے کے 72 سال بعد جنوبی پنجاب کو شناخت ملی ھے ان خیالات کا اظہار سابق صوبائی وزیر صنعت و سابق صدر چیمبرز آف کامرس اینڈ انڈسٹری ملتان خواجہ جلال الدین رومی نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیاانھوں نے مزید کہا کہ جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے قیام سے ایک طرف صنعتی ترقی کے در وا ھوں گے تو دوسری طرف (بقیہ نمبر3صفحہ6پر)

روزگار کے نئے مواقع پیدا ھوں گے ایڈیشنل چیف سیکرٹری اور ایڈیشنل آئی جی کی تقرری سے جنوبی پنجاب کے عوام کے مسائل اسی علاقے میں نہ صرف حل ھوں گے بلکہ حکومت کو چاھیے کہ وہ ایڈیشنل چیف سیکرٹری اور ایڈیشنل آئی جی کو بہاولپور و ملتان میں پندرہ روزہ ڈیوٹی روسٹرم ترتیب دے تاکہ جنوبی پنجاب سے تعلق رکھنے والے اپنے قریبی علاقوں سے آ کر اپنے کام کروا سکیں خواجہ جلال الدین رومی نے کہا جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے قیام سے جہاں ایک طرف چار سو کے قریب نئی آسامیاں پیدا ھوگئی ھیں جن میں آھستہ آھستہ اضافہ بھی ھو گا جس سے معشیت بہتر ھوگی بلکہ جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے قیام سے نئی صنعتی ترقی کے علاوہ ملتان، بہاول پور اور ڈیرہ غازی خان میں حکومتی بجٹ کے 33فیصد حصہ مختص ھونے سے ھر شعبہ تیزی سے ترقی ھو گی بلکہ علاقے کو خود مختاری بھی ملے گی جس سے جنوبی پنجاب کا نقشہ تبدیل ھو جائے گا اس کے علاوہ نئی صنعتوں کے قیام میں جب مدد ملے گی تو روزگار کے ھزاروں مواقع عوام کو ملیں گے خواجہ جلال الدین رومی نے وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی کے اس ویثرن کو بھی سراہا کہ ان کی کوششوں سے جنوبی پنجاب کے عوام کے مسائل اب دہلیز پر حل ھوں گے کہ اب وقت آ گیا ھے جنوبی پنجاب کی تمام سیاسی جماعتوں کے ساتھ سول سوسائٹی اور عوام کو مل کر علاقے کے بہتری کے لئے کام کرنا ھوگا جنوبی پنجاب کے وسائل کا درست سمت میں استعمال ھو گا خاص طور پر کپاس، مکء، گندم اور گنے کی کاشت کرنے والوں کو روزگار کے نئے مواقع پیدا ھوں گے۔

جالدین رومی

مزید :

ملتان صفحہ آخر -