محکمہ صحت: لیڈی سپروائزر کاخاوند بے لگام، سرکار ی گاڑی پرسیرسپاٹے

  محکمہ صحت: لیڈی سپروائزر کاخاوند بے لگام، سرکار ی گاڑی پرسیرسپاٹے

  

ملتان ( وقا ئع نگار ) محکمہ صحت ملتان کی برخاست شدہ لیڈی سپروائزر کے خاوند کا سرکاری پک اپ ڈالہ نجی استعمال میں رکھنے کا انکشاف ہوا ہے۔جو غیر قانونی ہے۔جبکہ دوسری جانب سی ای او ہیلتھ آفس خاموش تماشائی (بقیہ نمبر6صفحہ6پر)

کا کردار ادا کر رہا ہے۔ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ محکمہ صحت ملتان کی لیڈی سپروائزر جسکا تعلق ایک تنظیم سے ہے۔اس کو بہاولنگر میں ڈی سی کے خلاف دھرنا دینے۔توڑ پھوڑ کرنے۔ڈی سی کی کرسی پر زبردستی بیٹھنے اور مختلف شکایت کی بناء پر نوکری سے نومبر 2019 میں برخاست کردیا گیا تھا۔جس نے برخاستگی کے باوجود سرکاری ڈالا نمبری جے ٹی (547) محکمہ صحت ملتان انتظامیہ کے حوالے نہیں کیا۔یہاں ذرائع نے اپنا نام نہ ظاہر کرنے کی شرط پر بتایا ہے کہ برخاست شدہ لیڈی سپروائزر کا خاوند مذکورہ سرکاری ڈالے کا استعمال نجی کاموں پر کر رہا ہے۔جو آنے والے دنوں میں کسی بڑے حادثے کا سبب بن سکتا ہے۔محکمہ صحت ملازمین نے صحت کے اعلی حکام سے مذکورہ صورت حال پر فوری نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔جبکہ دوسری جانب محکمہ صحت حکام کے مطابق مذکورہ لیڈی سپر وائزر کے پاس سرکاری پک اپ ڈالا نہیں ہے۔وہ اپنی پرائیوٹ گاڑی استعمال کر رہی ہے۔

سیرسپاٹے

مزید :

ملتان صفحہ آخر -