صوابی‘ قتل و اقدام قتل کے مقدمہ میں مطلوب مفرور ملزمان گرفتار 

صوابی‘ قتل و اقدام قتل کے مقدمہ میں مطلوب مفرور ملزمان گرفتار 

  

صوابی(بیورورپورٹ) تھانہ ٹوپی پولیس نے ایک کارروائی کے دوران قتل و اقدام قتل کے مقدمہ میں مطلوب مفرور ملزمان گرفتار کر لیا۔ملزمان نے تنازعہ مستورات پر فائرنگ سے خاتون کو قتل جبکہ اس کے دو بھائیوں کو شدید زخمی کیا تھا، دونوں ملزمان کو گرفتار کرکے تفتیش کی جا رہی ہے ڈی پی او آفس سے جاری پریس ریلیز کے مطابق صوابی پولیس جرائم پیشہ عناصر کی فوری گرفتاریاں عمل میں لانے کے لئے پرعزم ہے جس کے تحت کاروائیوں کا سلسلہ جاری ہے۔مورخہ سولہ جون کو مدعی مقدمہ سکندر زیب ولد گل رحمٰن سکنہ زیدہ نے زخمی حالت میں مقامی تھانہ ٹوپی پولیس کو رپورٹ درج کراتے ہوئے بیان کیا کہ وہ بہن کی درخواست پر رشتہ داروں کے ساتھ مستورات کے تنازعے کو بذریعہ جرگہ حل کرنے کی غرض سے بھائیوں سمیت دیہہ کلابٹ گئے تھے جہاں مخالف فریق کے ملزمان بختیار شیر ولد مسکین اور افضال ولد بختیار شیر سکنہ کلابٹ نے ان پر اپنے اسلحہ سے فائرنگ کرکے جس سے ان کی بہن لگ کر موقع پر جانبحق جبکہ مدعی اور اس کا بھائی شدید زخمی ہوئے۔اس حوالے سے ایس ڈی پی او ٹوپی افتخار خان کی نگرانی میں ایس ایچ او ٹوپی شہزاد خان بمع ٹیم نے کامیاب کاروائی کرتے ہوئے ملزمان بختیار شیر اور افضال ساکنان کلابٹ گرفتار کر لئے, ملزمان مسلح ہو کر گھر میں داخل ہونے، گالم گلوچ اور خوف و ہراس پھیلانے کے مقدمہ  میں بھی پولیس کو مطلوب تھے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -