جنوبی کوریا میں ساتھی طالب علم کو قتل کرنے کے جرم میں 2افراد کو 30 سال قید کی سزا

جنوبی کوریا میں ساتھی طالب علم کو قتل کرنے کے جرم میں 2افراد کو 30 سال قید کی ...
جنوبی کوریا میں ساتھی طالب علم کو قتل کرنے کے جرم میں 2افراد کو 30 سال قید کی سزا

  

سیول (رضا شاہ) جنوبی کوریا کی اپیل کورٹ نے 2020 میں اپنے ہم جماعت کو قید کرنے اور اسے موت کے گھاٹ اتارنے کے جرم میں 2افراد کو 30 سال قید کی سز اسنائی تھی اور اب ضلعی عدالت نے اسی فیصلے کی توثیق کی ہے۔

تفصیلات کے مطابق دارالحکومت سیول کی ہائی کورٹ نے 22 سالہ 2 مجرمان کو ستمبر سے نومبر 2020 تک اپنے سابق ہائی سکول کے ہم جماعت پر حملہ کرنے اور اسے ایک جعلی معاہدہ لکھ کر بلیک میل کرنے کا قصوروار ٹھہرایاہے جس میں لکھا گیا تھا کہ مقتول نے اُن کو قرض میں لی گئی رقم ادا کرنی ہے۔ مجرمان  31 مارچ کو مقتول کو مغربی سیول میں اپنی رہائش گاہ پر لے گئے اور اسے  کمرے میں بند کر دیا،پھر انہوں نے اسے اپنے خلاف لگائے گئے حملے کے الزامات کو واپس لینے پر مجبور کیا اور 5.7 ملین کورین وان ($4,386) سے زیادہ کی رقم وصول کی اور اسے تشدد کا نشانہ بنایا۔

پولیس نے 13 جون کو متاثرہ کی لاش ان کی رہائش گاہ سے ملنے کے بعد دونوں کو گرفتار کر لیا تھا،عدالتی ریکارڈ کے مطابق متاثرہ کی موت نمونیا اور غذائی قلت سے ہوئی ،موت کے وقت اُس کا وزن صرف 34 کلو گرام تھا۔

مزید :

بین الاقوامی -