کشمیر کوبھارت کا اٹوٹ انگ قرار دینے سے کشیدگی میں اضافہ ہوگا، طارق احسان

کشمیر کوبھارت کا اٹوٹ انگ قرار دینے سے کشیدگی میں اضافہ ہوگا، طارق احسان

لاہور(پ ر ) بھارتی وزیر خارجہ کی جانب سے کشمیر کو ایک مرتبہ پھر بھارت کا اٹوٹ انگ قرار دینے کے بیان پر کڑی تشویش اور افسوس کا اظہار کیا گیا اور خدشہ ظاہر کیا گیا کہ اس بیان سے پاک بھارت کشیدگی میں اضافہ ہوگا جو خطہ کے امن کیلئے نقصان وہ ہے یوتھ فورم فار کشمیر پنجاب لاہور کا ایک ہنگامی اجلاس زیرصدارت چیف آرگنائزر پنجاب طارق احسان غوری مرکزی دفتر گلبرگ میں منعقد ہوا اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے طارق احسان غوری نے کہا کہ ایک طرف توبھارتی نیتا جمہوریت اور امن کے پیامبر کہلانا چاہتے ہیں جبکہ دوسری جانب 2 کروڑ کشمیریوں کو غلام بنا کر ان کے خلاف بدترین انسانی حقوق کی پامالی کر رہے ہیں اور کشمیر کے لئے حق خودارادیت کے حصول کیلئے جدوجہد کرنے والے کشمیری مسلمانوں کے زخموں پر نمک چھڑک رہے ہیں طارق احسان غوری نے کہا کہ کشمیر بھارت کا نہیں بلکہ کشمیر میں بسنے والے 2 کروڑ کشمیریوں کا ہے وہ دن دور نہیں جب کشمیری اپنی منزل پالیں گے اور بھارتی غاصبوں کو کشمیر چھوڑنا پڑے گا مسئلہ اگر اقوام متحدہ سنجیدگی کے ساتھ مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے اپنا کردار ادا کرے تو 2 کروڑکشمیریوں کے مستقبل کو روشن اور کامیاب بنایا جاسکتا ہے

مزید : میٹروپولیٹن 4