عمران خان کا سونامی روکنا حکمرانوں کے بس کا کام نہیں،میاں اسلم اقبال

عمران خان کا سونامی روکنا حکمرانوں کے بس کا کام نہیں،میاں اسلم اقبال


لاہور(انٹرویو،میاں اشفاق انجم،تصاویر ایوب بشیر) عمران خان کا سونامی روکنا حکمرانوں کے بس کا کام نہیں ، اسلام آباد،فیصل آباد کے بعد اب سیالکوٹ میں میدان لگے گا،بڑی عید سے پہلے(ن)لیگ کی حکومت کی قربانی ہونے والی ہے،تحریک انصاف کسی اتحاد کا حصہ نہیں بنے گی البتہ انتخابی اصلاحات کے لیے سب کو ساتھ لے کر چلیں گے،ان خیالات کا اظہار تحریک انصاف کے مرکزی رہنما اور رکن پنجاب اسمبلی میاں اسلم اقبال نے روزنامہ پاکستان سے خصوصی انٹرویو میں کیا، میاں اسلم نے کہا موجودہ حکومت دھاندلی کی پیدا وار ہے ایک سال میں عوام کو دو پُلوں کے علاوہ کچھ نہیں دیا،انرجی بحران شدید ہو گیا ہے مہنگائی کئی گناہ بڑھ گئی ہے بے روز گاری میں بے تحاشا اضافہ ہو گیا ہے ایک خاندانی حکمرانی ہے عوام کو بد امنی مہنگائی کے سوا کچھ نہیں دیا ایک روپے پٹرول سستا کیا اورسات روپے مہنگا کر دیا ہے کہتے کچھ ہیں کرتے کچھ ہیں ،میاں برادران کے دوہرے معیار نے ملک کوبحرانوں سے دو چار کر دیا ہے،پاکستانی قوم کی واحد امید عمران خان ہے، پاکستانی عوام عمران خان کو وزیر اعظم دیکھنا چاہتی ہے میاں اسلم اقبال نے کہاتحریک انصاف کسی اتحاد کا حصہ نہیں بن رہی بلکہ انتخابی اصلاحات کے ایجنڈے پر جو بھی متفق ہوا اس کو ساتھ لے کر چلیں گے،تحریک انصاف کی مقبولیت کا اندازہ ضمنی الیکشن سے لگایا جا سکتا ہے حکمران خوف زدہ ہیں سیالکوٹ میں سونامی سب کو بہا کر لے جائے گااسلام آباد اور فیصل آباد سے بڑا جلسہ ہو گا،بڑی عید سے پہلے بڑی خوشخبری قوم کوملے گی حکمرانوں کے جانے کی انشاء للہ۔

مزید : صفحہ آخر