پیپلز پارٹی کی جمہوریت کی حمایت کو اسکی کمزوری نہ سمجھا جائے ، منظور احمد وٹو

پیپلز پارٹی کی جمہوریت کی حمایت کو اسکی کمزوری نہ سمجھا جائے ، منظور احمد وٹو

لاہور(جنرل رپورٹر)میاں منظور احمد وٹو صدر پاکستان پیپلز پارٹی نے پارٹی قائدین کے خلاف موجودہ حکومت کی انتقامی کارروائیوں کو شدید ہدف تنقید بنایا ہے اور کہا ہے کہ پیپلز پارٹی کی جمہوریت کی حمایت کو اسکی کمزوری نہ سمجھا جائے ۔ یہ بات انہوں نے یہاں سے جاری ایک بیان میں کہی ۔ انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی کے سابق وزرائے اعظم اور سابق وفاقی وزیر برائے تجارت کے خلاف انتقامی کارروائیاں ختم کی جائیں کیونکہ انتقامی سیاست نے ملک کو بے پناہ نقصان پہنچایا ہے اور ملک کی سیاسی تاریخ اسکی گواہ ہے ۔ انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ وہ تاریخ دہرانے سے اجتناب کرے جو کہ میثاقِ جمہوریت کی روح کے سراسر منافی ہے۔ منظور احمد وٹو نے کہا کہ پیپلز پارٹی کے پچھلے پانچ سالہ دور میں ملک میں ایک بھی سیاسی قیدی نہیں تھا اور میثاقِ جمہوریت کے تحت مفاہمت کی پالیسی پر مکمل طور پر عمل کرتے ہوئے اپنی آئینی مدت پوری کی۔انہوں نے کہا کہ انتقام کی سیاست جمہوری اصولوں کی نفی ہے اس لیے اسکو ہمیشہ کے لیے دیس سے نکال دینا چاہیے ۔ میاں منظور احمد وٹو نے یاددلایا کہ انتقامی سیاست نے وفاق پاکستان اور جمہوریت کو پہلے ہی ناقابل تلافی نقصان پہنچایا ہے اور اب سیاسی قیادت پر لازم ہے کہ وہ سیاسی پختگی کا مظاہر کرے

مزید : صفحہ آخر