ڈکیتی وارداتیں روکنے کے بجائے پولیس اہلکار عوام کو پریشان کررہے ہیں

ڈکیتی وارداتیں روکنے کے بجائے پولیس اہلکار عوام کو پریشان کررہے ہیں

مانگا منڈی (نمائندہ خصوصی) تھانہ مانگا منڈی کے اہلکار دن رات لوگوں سے لوٹ مار کر رہے ہیں،کوئی پوچھنے والا نہ ہے ۔تفصیلات کے مطابق ڈکیتی ،راہزنی اورچوری کی وارداتوں پر قابو پانے کےلئے موبائل پولیس والے موٹر سائیکل پر سوار ہوکرتین یا چار کی ٹولیوں بنا کر رائےونڈ روڈ پر راکو فیکٹری ،کماس روڈملتان روڈ شامکی بھٹیاں موٹروے پر اور ہنڈا فیکٹری کے قریب ناکے لگا تے ہےں۔وہ موٹر سائیکل اور کار سواروں کو روک کر جامہ تلاشی لینے کے بعد ایک سو سے لےکر دو سو روپیہ زبردستی وصول کر رہے ہیں۔اس کے علاوہ بڑھتی ہوئی وارداتوں پر قابو پانے کےلئے تھانہ مانگا منڈی کو ایک سپےشل گاڑی اور اہلکار ملے ہیں مگرموبائل گاڑی پر تعینات اے ایس آئی ریاض احمداور اے ایس آئی محمد نواز گشت کرنے کی بجائے ملتان روڈ پر ناکے لگا کر ٹرکوں ، موٹر سائیکل اور کار سواروں کو روک کر روزانہ دن اور رات کو ہزاروں روپے دیہاڑی بنانے کے چکر میں رہتے ہیں۔ نمائندہ روزنامہ ”پاکستان“نے عوام کی شکایت پر مذکورہ اے ایس آئی صاحبان سے رابطہ کیا اوربلاوجہ عوام کو پریشان کرنے کے بارے مےں پوچھاتو انہوں نے سخت الفاظ میں کہا کہ جاو¿ جو کچھ آپ کر سکتے ہیں کریں ، ہمارے پاس اختیارہے، ہم آپ کے خلاف بھی کوئی مقدمہ درج کر سکتے ہیں۔واضح رہے کہ ملتان روڈ پرموٹروے پر صرف موٹروے پولیس والے ہی چالان وغیرہ یا چیکنگ کرسکتے ہیں،تھانہ مانگا منڈی پولیس غیر قانونی ناکے لگاکر عوام کو دونوں ہاتھوں سے لوٹ رہی ہے، تھانہ مانگا منڈی پولیس صرف مخبری ہونے پر ملتان روڈ پر ناکہ لگا سکتی ہے۔ مانگا منڈی کے شہریوں اور معززین علاقہ شیخ خالد محمود ،طارق محمود ،عمران علی،مجیب الرحمن،وقاض احمد ،محمد شاہد نے وزیر اعلیٰ پنجاب اور سی سی پی او لاہورسے مطالبہ کیا ہے کہ عوام کو پریشان کرنے والے اہلکاروں کے خلاف فوری نوٹس لےاجائے۔

مزید : علاقائی