پاک چین راہداری منصوبہ ملک دشمنوں کو کھٹک رہا ہے ، سانحہ مستونگ کے ذمہ داروں کو کیفر کردار تک پہنچائیں گے : اے پی سی اعلامیہ

پاک چین راہداری منصوبہ ملک دشمنوں کو کھٹک رہا ہے ، سانحہ مستونگ کے ذمہ داروں ...
پاک چین راہداری منصوبہ ملک دشمنوں کو کھٹک رہا ہے ، سانحہ مستونگ کے ذمہ داروں کو کیفر کردار تک پہنچائیں گے : اے پی سی اعلامیہ

  

کوئٹہ ( مانیٹرنگ ڈیسک ) سانحہ مستونگ کے بعد وزیر اعظم نواز شریف کی جانب سے آل پارٹیز کانفرنس طلب کی گئی تھی جس کے اختتام پر اے پی سی کا مشترکہ اعلامیہ جاری کر دیا گیا ہے ۔

سرکاری اعلامیہ کے مطابق بتایا گیا ہے کہ پاک چین اقتصادی راہداری منصوبہ پاکستان کے دشمنوں کو کھٹک رہا ہے اور یہ منصوبہ روکنے کے لیے دشمن اوچھے ہتھکنڈوں پر اتر آیا ہے ۔ سرکاری اعلامیہ کے مطابق بتایا گیا ہے کہ سیاسی اور عسکری قیادت دہشت گردی کو ختم کرنے کے لیے پر عزم ہے جبکہ آپ پارٹیز کانفرنس میں موجود تمام سیاسی جماعتوں نے سانحہ مستونگ کے ذمہ داروں کو کیفر کردار تک پہنچانے کے عزم کا ارادہ کیا ہے ۔

اے پی سی میں اتفاق کیا گیا ہے کہ ملک دشمن قوتیں بلوچستان اور پاکستان کے حالات خراب کر رہی ہیں لیکن سیاسی و عسکری قیادت مل کر اس ناپاک منصوبے کو ناکام بنائیں گے ۔ سانحہ مستونگ کے بعد پیدا ہونے والی صورتحال کے حوالے سے اے پی سی کے شرکاءنے صوبائی قیادت کی بالغ نظری کو سراہتے ہوئے کہا کہ صوبہ میں تفرقہ پیدا کرنے کی سازش کو بلوچ رہنماﺅں اور عوام نے مل کر ناکام بنایا ۔ آل پارٹیز کانفرنس کے اعلامیہ کے مطابق کانفرنس میں سانحہ مستونگ کے شہداءکے لیے فاتحہ خوانی کی گئی جبکہ ان شہداءکے لواحقین سے اظہار تعزیت بھی کیا گیا ۔

 یاد رہے اے پی سی میں وزیر اعظم نواز شریف سمیت وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان ، کور کمانڈر کوئٹہ لیفٹیننٹ جنرل ناصر خان جنجوعہ اور صوبے کی سیاسی و مذہبی جماعتوں کے رہنماﺅں نے شرکت کی تھی ۔ اس اجلاس میں صوبے کے امن و امان سے متعلق تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا تھا ۔ 

مزید :

کوئٹہ -اہم خبریں -