عالمی مارکیٹ کے تناسب سے پٹرول 30روپے لیٹر ہونا چاہیے،عظمیٰ بخاری

عالمی مارکیٹ کے تناسب سے پٹرول 30روپے لیٹر ہونا چاہیے،عظمیٰ بخاری

  

لاہور(پ ر) مسلم لیگ(ن) پنجاب کی ترجمان عظمیٰ بخاری نے کہا ہے کہ عالمی مارکیٹ کے مطابق آج پاکستان میں 30روپے لیٹر پیٹرول فروخت ہونا چاہیے۔عالمی مارکیٹ میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں تاریخ کی کم ترین سطح پر آگئی ہیں۔وفاقی حکومت نے عالمی مارکیٹ کے مطابق پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی نہیں کی۔مسلم لیگ (ن) کے دور حکومت میں عالمی مارکیٹ میں پیٹرول کی فی بیرل65ڈالر قیمت تھی۔نوازشریف حکومت نے اس کے باوجود پاکستانی عوام کو 70روپے تک لیٹر پیٹرول فراہم کیا۔

اس وقت اسد عمر اسحاق ڈار پر 40روپے مہنگا پیٹرول فروخت کرنے کا الزام لگاتے تھے۔آج عالمی مارکیٹ میں پیٹرول 15ڈالر فی بیرول فروخت ہو رہا ہے۔پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں پر ردعمل میں کہاوفاقی حکومت پھر بھی 74روپے 54پیسے فی لیٹر پیٹرول فروخت کررہی ہے۔

اسد عمر صاحب آج آپ کے وزیراعظم کتنے روپے کا ایک لیٹر پر عوام کی جیب پر ڈاکہ مار رہے ہیں؟پیٹرولیم مصنوعات پر لیویز اور ٹیکس بھی مزید بڑھادیے گئے ہیں۔وزیراعظم اور ترجمان پیٹرولیم کے قیمتوں کے متعلق جھوٹ بول رہے ہیں۔عالمی مارکیٹ کے حساب سے آج پاکستان میں 30روپے لیٹر پیٹرول فروخت ہونا چاہیے۔چار ماہ میں پیٹرولیم مصنوعات کی زائد قیمتیں وصول کرکے عمران حکومت نے اربوں کی دیہاڑی لگائی ہے۔کرونا کے نام پرچندہ،غیر ملکی امداد اور پیٹرول پر اربوں کی دیہاڑی بھی حکمران کا پیٹ نہیں بھرسکی۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -