مقبوضہ وادی، کشمیریوں کی نسل کشی مزید تیز، 24گھنٹوں میں بھارتی فوج نے 13نوجوان شہید کر دیئے

مقبوضہ وادی، کشمیریوں کی نسل کشی مزید تیز، 24گھنٹوں میں بھارتی فوج نے 13نوجوان ...

  

سرینگر (مانیٹرنگ ڈیسک) مقبوضہ کشمیر میں قابض بھارتی فوج نے ایک بار پھر ظلم کی انتہا کر دی اور نوجوان کشمیریوں کی نسل کشی میں مزید تیزی لاتے ہوئے صرف ایک روز کے دوران 13 کشمیری نوجوانوں کو شہید کر دیا۔تفصیلات کے مطابق دنیا کورونا وائرس سے نمٹنے کیلئے تگ و دو کر رہی ہے تو وہیں پر قابض اور ظالم بھارتی فوج مقبوضہ کشمیر میں کشمیریوں کی نسل کشی کرنے لگ گئی ہے، صرف ایک روز کے دوران 13 کشمیریوں کو شہید کر دیا۔واضح رہے کہ مقبوضہ وادی میں لاک ڈاون جاری ہے جس کی وجہ سے کشمیریوں کا جینا دوبھر ہو چکا ہے، علاقے میں کھانے پینے کی اشیا کی شدید قلت ہے جبکہ باہمی رابطے کیلئے انٹرنیٹ کا استعمال بھی ممنوع ہے۔ اس ذہنی اذیت والے ماحول میں جب کشمیری بے جا پابندیوں کیخلاف احتجاج کرتے ہیں تو بھارتی فوج ان پر گولیاں برسانے سے بھی دریغ نہیں کرتی۔کشمیر میڈیا سروس کے مطا بق قابض بھارتی فوج نے ریاستی دہشت گردی کی تازہ کارروائیوں کے دوران 13 کشمیری نوجوان کو شہید کر دیا۔کشمیر میڈیا سروس کے مطا بق قابض اور ظالم بھارتی فوج نے مقبوضہ وادی کے علاقے میندرمیں اور ضلع پونچھ کے مختلف گاؤں میں دس نوجوانوں کو شہید کیا۔کشمیر میڈیا سروس کے مطابق قابض بھارتی فوج نے ان علاقوں میں 28 مئی سے آپریشن شروع کیا ہوا ہے۔ بھارتی فوج کے افسر نے بتایا کہ ضلع پونچھ میں کچھ لوگوں کی تلاش جاری ہے۔کشمیر میڈیا سروس کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں قابض فوج نے ضلع راجوڑی میں سرچ آپریشن کی آڑ میں مزید 3 کشمیریوں کو فائرنگ کر کے شہید کر دیا۔خبر رساں ادارے کے مطابق ظالمانہ کارروائی کیخلاف کشمیریوں نے احتجاج کرتے ہوئے بھارتی فوجیوں پر شدید پتھراو کیا۔ کشمیر میڈیا سروس کی رپورٹ کے مطابق مئی کے مہینے میں دوبچوں سمیت 21 کشمیریوں کو شہید کیا گیا جبکہ 200 سے زائد افراد زخمی ہوئے۔

کشمیری شہید

مزید :

صفحہ اول -