ملک میں کوئی جمہوریت نہیں، مخالفین کو جیلوں میں ڈالا جا رہا ہے: سعد رفیق

ملک میں کوئی جمہوریت نہیں، مخالفین کو جیلوں میں ڈالا جا رہا ہے: سعد رفیق
ملک میں کوئی جمہوریت نہیں، مخالفین کو جیلوں میں ڈالا جا رہا ہے: سعد رفیق

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) مسلم لیگ ن کے رہنما خواجہ سعد رفیق نے کہاہے کہ کارکردگی کے لفظ کا پی ٹی آئی حکومت میں کوئی نام نہیں، اپوزیشن متحد نہیں جس کے ذمہ دار سب ہیں، ملک میں کوئی جمہوریت نہیں، مخالفین کو جیلوں میں ڈالا جا رہا ہے۔

لیگی رہنما خواجہ سعد رفیق نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا اپوزیشن کا اکٹھے نہ ہونا ایک المیہ ہے جس کے ہم سب ذمہ دار ہیں، آپ نے گردن اور گریبان سے دبوچا ہوا ہے، جس ملک میں قائد حزب اختلاف کو ہر وقت کٹہرے میں کھڑا کیا جائے وہاں کونسی جمہوریت ہے، اس جمہوریت نے ریاست پاکستان کو جنگل میں تبدیل کر دیا ہے، پاکستان میں بدقستمی سے جمہوریت نے وہ سفر طے نہیں کیا جو کیا جانا چاہیے تھا۔

سعدرفیق کا کہنا تھا پاکستان میں 4 مارشل لا آئے، پاکستان آزاد ہوگیا مگر آزادی صرف اشرافیہ تک رہی، عام آدمی تک نہیں پہنچی، شہباز شریف ان مشکلات سے نکل جائے گا۔ انہوں نے کہا این ڈی ایم اے ناگہانی آفات کیلئے ہوتا ہے، یہاں خود آفات پیدا کی جا رہی ہیں، یہی نہیں پتا کہ کورونا وائرس سے متاثرہ کل کتنے افراد ہیں، جب ڈینگی ہوا تو شہباز شریف اور سلمان رفیق کی کاوشوں سے ڈینگی پر قابو پایا گیا، ڈینگی کا 8000 روپے کا ٹیسٹ مفت کیا گیا، آج 8 ہزار کا کورونا ٹیسٹ کیسے کروایا جاسکتا ہے۔

مزید :

قومی -علاقائی -پنجاب -لاہور -