”امریکہ اور نیٹو ہماری سرحدوں کے قریب اشتعال انگیز کام کر رہے ہیں “روسی فوج نے سنگین الزام عائد کردیا

”امریکہ اور نیٹو ہماری سرحدوں کے قریب اشتعال انگیز کام کر رہے ہیں “روسی فوج ...
”امریکہ اور نیٹو ہماری سرحدوں کے قریب اشتعال انگیز کام کر رہے ہیں “روسی فوج نے سنگین الزام عائد کردیا

  

ماسکو(ڈیلی پاکستان آن لائن)روسی فوج نے الزام عائد کیا ہے کہ امریکا اور نیٹوہماری سرحدو ں کے قریب اشتعال انگیز فوجی مشقیں کر رہے ہیں ۔غیر ملکی میڈ یا رپورٹس کے مطابق کے مطابق روسی جنرل سٹاف کے کرنل سرگئی روڈسکوئی نے کہا کہ روس نے نیٹو کو کرونا وائرس کے پھیلنے کے دوران فریقین کی فوجی سرگرمیوں کو کم کرنے کی تجویز کا باضابطہ پیغام بھیجا تھا لیکن اتحاد نے اس پیش کش کو نظرانداز کیا۔روڈسکوئی نے خاص طور پر بحر پارنٹزمیں حالیہ نیٹو مشقوں کا ذکر کیا اور الزام عائد کیا کہ امریکا اور نیٹو فوجیں روسی سرزمین پر حملوں کی مشقیں کرتے ہیں اور روسی ساختہ بین البراعظمی بیلسٹک میزائلوں کو روکنے کی تیاری کرتے ہیں۔ ان کاکہنا تھا کہ سرد جنگ کے بعد سے یہ مشقیں نیٹو کی جانب سے اپنی نوعیت کی پہلی سب سے بڑی مشقیں ہیں۔روڈسکوئی نے گذشتہ ماہ روسی سرحد کے قریب امریکی اسٹریٹجک جوہری بمباروں کے کی پروازوں کی تعداد میں اضافے کی نشاندہی بھی کی تھی۔ انہوں نے کہا کہ امریکی اسٹریٹجک B-1B بمباروں نے گذشتہ ہفتے پہلی مرتبہ یوکرین پر اڑان بھری تھی ، جس کی وجہ سے روس کو جنگی طیارے بھیجنے اور فضائیہ کو الرٹ کرنا پڑا تھا۔

مزید :

بین الاقوامی -