خیبر پختونخو ا اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے محکمہ لیبر اجلاس کا انعقاد

  خیبر پختونخو ا اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے محکمہ لیبر اجلاس کا انعقاد

  

      پشاور (سٹاف رپورٹر) ورکرز ویلفیئر بورڈ حکام، سپریم کورٹ آف پاکستان کے احکامات کے مطابق عارضی ملازمین کی مستقلی یقینی بنائے۔ چیئرمین و ایم پی اے شیر اعظم خان  خیبر پختونخوا اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے محکمہ لیبر کے چئیرمین و ممبر صوبائی اسمبلی شیر اعظم خان نے ورکرز ویلفیئر بورڈ کے حکام کو سپریم کورٹ آف پاکستان کے واضح احکامات کے مطابق عارضی ملازمین کی مستقلی یقینی بنانے کیلئے ھدایات جاری کیے ہیں۔یہ ھدایات چیئرمین شیر اعظم خان نے گزشتہ روز اسمبلی کانفرنس ہال پشاور میں منعقدہ قائمہ کمیٹی برائے محکمہ لیبر کی اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے جاری کیں۔ اجلاس میں ممبران کمیٹی و اراکین صوبائی اسمبلی احتشام جاوید، لائق محمد خان، شاہ داد خان، ریحانہ اسمعیل، عائشہ بی بی، پختون یارخان اور شگفتہ ملک کے علاوہ سیکرٹریز محکمہ لیبر و ورکرزویلفیئر بورڈ، ڈپٹی و اسسٹنٹ سیکرٹریز صوبائی اسمبلی، ڈائریکٹر جنرل ادارہ برائے سماجی تحفظِ کارکنان، ڈائریکٹر لیبر، اسسٹنٹ ایڈوکیٹ جنرل اور سیکشن آفیسر محکمہ قانون سمیت دیگر متعلقہ افسران بھی شریک تھے۔ اس موقع پر محکمہ لیبر میں 2014 تا حال  مختلف درجات پر بھرتی کیے گئے کل 191 ملازمین، کنٹریکٹ ملازمین کی مستقلی، ورکرز ویلفیئر بورڈ اور ادارہ برائے سماجی تحفظِ کارکنان سمیت لیبر ڈائریکٹریٹ کی ذمہ داریوں اور اٹھائے جانے والے اقدامات سے متعلق سیر حاصل گفتگو کی گئی۔ چیئرمین و ایم پی اے شیر اعظم خان نے صنعتوں سے وابستہ تقریباً 65 فیصد ملازمین کو بینکوں کے ذریعے تنخواہیں دلانے کے عمل کو یقینی بنانے پر متعلقہ حکام کو پر خراج تحسین پیش کیا۔ انہوں نے اس سلسلے میں 100 فیصد اہداف کے حصول کے لیے اقدامات مزید تیز کرنے اور پیش رفت پر اگلے کمیٹی اجلاس میں ممبران کو بریف کرنے کے لیے بھی ھدایات جاری کیے۔ انہوں نے لیبر کالونیز کی حالتِ زار بہتر بنانے پر بھی زور دیا۔ چیئرمین شیر اعظم خان ادارہ برائے سماجی تحفظِ کارکنان کے حکام کو بہتر کارکردگی دکھانے اور ورکرز کے اندراج کا عمل تسلی بخش بنانے سمیت ان کے خاندان کیلئے صحت سہولیات کی فراہمی یقینی بنانے پر اطمینان کا اظہار کیا۔ انہوں نے حکومت کی وضع کردہ کم از کم اجرت یقینی بنانے پر زور دیا۔ شیر اعظم خان نے محکمہ لیبر کے حکام کو ورکرز کی فلاح و بہبود کے لیے اقدامات مزید تیز اور تسلی بخش بنانے کے لیے بھی ھدایات جاری کیں۔ انہوں نے اسمبلی انتظامیہ کو رواں ماہ کی 15 تاریخ کو دوبارہ کمیٹی اجلاس بلانے کے احکامات بھی جاری کیے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -