سی ٹی او کی زیر صدارت ٹریفک نظام بارے اجلاس 

  سی ٹی او کی زیر صدارت ٹریفک نظام بارے اجلاس 

  

پشاور(کرائم رپورٹر) چیف ٹریفک آفیسر عباس مجید خان مروت کی سربراہی میں ٹریفک نظام کا جائزہ لینے کے لئے اجلاس کا انعقاد کیا گیا جس میں ایس پی ٹریفک ہیڈ کوارٹرز رحیم حسین‘ ایس پی کینٹ خان خیل‘ ایس پی سٹی محمد سعید' ڈی ایس پیز سمیت ٹریفک آفیسرز اور ٹریفک وارڈنز نے شرکت کی۔ چیف ٹریفک آفیسر عباس مجید خان مروت نے گزشتہ ہفتے سٹی ٹریفک پولیس پشاور کی جانب سے کی جانیوالی کارروائیوں کا تفصیلی جائزہ لیا۔ اجلاس کے دوران چیف ٹریفک آفیسر عباس مجید خان مروت کو تجاوزات مافیا کے خلاف کارروائیوں‘ کالے شیشوں کے استعمال‘ اوور لوڈنگ‘ نو پارکنگ زونز کی خلاف ورزیوں‘ ہیلمٹ‘ سیٹ بیلٹ‘ ون ویلنگ‘ غیر رجسٹرڈ موٹر سائیکلوں اور دیگر مہمات کے بارے میں بریفنگ دی گئی جس پر چیف ٹریفک آفیسر عباس مجید خان مروت نے اطمینان کا اظہار کیا اور ہدایت کی کہ شہر بھر میں جاری مہمات میں مزید تیزی لائی جائے.  انہوں نے کہا کہ سٹی ٹریفک پولیس پشاور کے اہلکار پہلے سلام پھر کلام کی پالیسی اپنائیں اور باقاعدہ شہریوں کو سیٹ بیلٹ‘ ہیلمٹ‘ ڈرائیونگ لائسنس' نو پارکنگ' ون ویلنگ اور ون وے خلاف ورزی کے حوالے سے آگاہی دیں اور شہریوں میں باقاعدہ پمفلٹس تقسیم کریں تاکہ وہ اپنے گھروں اور محلوں میں جا کر شہریوں کو ٹریفک قوانین بارے آگاہ کر سکیں۔ انہوں نے کہا کہ تجاوزات کے خلاف آپریشنز کا سلسلہ جاری رکھا جائے اور کسی کے ساتھ کوئی نرمی نہ برتی جائے۔ انہوں نے مزید کہا کہ شہر میں بلا تعطل ٹریفک نظام رواں دواں رکھنے کے لئے تمام تر صلاحیتیں بروئے کار لائی جائیں اور اس سلسلے میں کسی قسم کی غفلت برداشت نہیں کی جائیگی جبکہ مرتکب افراد کے خلاف سخت قانونی کارروائی عمل میں لائی جائیگی۔ انہوں نے ہدایت کی کہ تجاوزات مافیا کیخلاف کارروائیوں کے بعد چیک اینڈ بیلنس رکھیں تاکہ آئندہ کوئی خلاف ورزی نہ کرے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -