وزیر زراعت کی افسروں کو منصوبوں کی بروقت تکمیل یقینی بنانے کی ہدایت

  وزیر زراعت کی افسروں کو منصوبوں کی بروقت تکمیل یقینی بنانے کی ہدایت

  

        پشاور (سٹاف رپورٹر)خیبرپختونخوا کے وزیر زراعت ولائیوسٹاک اور ماہی پروری محب اللہ خان نے زراعت ولائیو سٹاک کے  افسران سے کہا ہے کہ وہ جاری منصوبوں کی بروقت تکمیل اور نئے منصوبوں کی بہتر منصوبہ بندی کو یقینی بنائیں اور اس حوالے سے درپیش مسائل کو ان کے نوٹس میں لایا جائے تاکہ ترقیاتی عمل میں کوئی رکاوٹ درپیش نہ آئے، ان خیالات کا اظہار انہوں نے زراعت ولائیو۔ سٹاک اور ماہی پروری کے شعبہ جات کے مختلف جاری منصوبوں پر کام کی پیش رفت اور آئندہ کی سکیموں کی منصوبہ بندی کے حوالے سے منعقدہ جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا اس موقع پر  رکن صوبائی اسمبلی عزیزاللہ گران چیف پلاننگ آفیسر احمد سعید،متعلقہ محکموں کے ڈی جیز اور دیگر افسران بھی موجود تھے اجلاس میں 8 ہزار 700 ملین روپے کے جولائی 2022سے جون 2024 تک چیف منسٹر انٹیگریٹڈ لائیوسٹاک ڈیولپمنٹ پروگرام، خیبر پختونخوا 3800ملین روپے کی لائیوسٹاک ڈیولپمنٹ پروگرام برائے ضم اضلاع اور 1500 ملین روپے کے دو سالہ ترقیاتی پروگرام خیبر پختونخوا سمیت متعدد منصوبوں پر کام کی پیش رفت کا جائزہ لیا گیا چیف منسٹر انٹیگریٹڈ لائیوسٹاک ڈیولپمنٹ پروگرام سیایک لاکھ 15ہزار لوگوں کو روزگار کے مواقع ملیں گے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیر زراعت نے کہا کہ صوبے میں زراعت اور لائیو سٹاک کے شعبے کی ترقی کے لئے کثیر رقوم سے قلیل اور طویل مدتی میگا منصوبے شروع کیے گئے ہیں جن کا مقصد زراعت میں خود کفالت حاصل کرنے کے ساتھ ساتھ کسانوں اور زمین داروں کے مسائل بھی حل کرنا ہے انہوں نے کہا کہ لائیوسٹاک سے زیادہ غریب اور دیہاتوں کے لوگوں کے روزگار وابستہ یہی وجہ ہے کہ صوبائی حکومت نے صوبے کی ترقی پر خاص توجہ مرکوز کیے ہوئے ہے تاکہ غربت و پسماندگی کا خاتمہ ہو سکے انہوں نے متعلقہ حکام کو صوبے میں گوشت انڈے اور دودھ کی پیداوار بڑھانے کے لیے ٹھوس اقدامات اٹھانے کی بھی ہدایت کی تاکہ غذائی ضروریات پوری ہوسکیں 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -