گھریلو ملازمہ قتل کرنے کے مقدمہ کی سماعت ،مدعی مقدمہ کی طلبی کا سمن جاری

گھریلو ملازمہ قتل کرنے کے مقدمہ کی سماعت ،مدعی مقدمہ کی طلبی کا سمن جاری

لاہور(نامہ نگار)ایڈیشنل سیشن جج بشریٰ زمان نے 15 سالہ گھریلو ملازمہ فضہ بتول کو تشدد کا نشانہ بناتے ہوئے ہلاک کرنے کے مقدمہ کی سماعت مدعی مقدمہ سب انسپکٹر محمد افضل کی طلبی کا سمن جاری کرتے ہوئے6 مارچ تک ملتوی کردی فاضل جج کے گزشتہ روز چارج سنبھالنے کی وجہ سے مقدمہ میں کوئی پیش رفت نہ ہوسکی استغاثہ کے مطابق ڈیفنس ہاﺅسنگ اتھارٹی فیز ون کے رہائشی پروفیسر سلمان رفیق نے ڈسکہ کے رہائشی عباس کی بیٹی اپنی گھریلو ملازمہ فضہ بتول کو ڈنڈوں سے تشدد کا نشانہ بنایا جس کے نتیجے میں لڑکی ہسپتال میں دم توڑ گئی لڑکی کے ورثاءدوسرے شہر کے رہائشی ہونے کے باعث موقع پر نہ پہنچ پائے جس پر پولیس کے سب انسپکٹر نے ملزم کے خلاف 18 جنوری 2014 ءکومقدمہ درج کروا کر اسے گرفتار کرکے آلہ قتل برآمد ہونے کے بعد اسے جیل بھجوایا اور تفتیشی سنٹر سے اس کا چالان مکمل کرکے سماعت کے لئے عدالت میں پیش کردیا آئندہ سماعت پر مدعی مقدمہ سب انسپکٹر محمد افضل کا بیان قلمبند کیا جائے گا۔

مزید : میٹروپولیٹن 4