نیسپاک نے 2016کے دوران1.8ارب روپے کا منافع کمایا

نیسپاک نے 2016کے دوران1.8ارب روپے کا منافع کمایا

لاہور (کامر س رپورٹر) انجینئرنگ کنسلٹنسی کمپنی نیسپاک نے مالی سال 2016 میں8.1 ارب روپے کا بزنس حاصل کیاجبکہ 6.1 ارب روپے کے اخراجات کے بعد 1.8 ارب روپے کا منافع بھی کمایا اس کے علاوہ کمپنی نے نئے ٹیکسز کی مد میں 452 ملین روپے قومی خزانے میں جمع کروائے۔ یہ معلومات نیسپاک ہاوس لاہور میں ہونے والی ایک پریس بریفنگ میں بتائی گئیں۔ اس مو قع پر نیسپاک کے ایم ڈی امجد اے خان ، جنر ل مینجر ہیڈ انجینئر احمد سعید ، چیف فنانشل آفیسر فیصل مجید اورمحمد ذولفقارمو جو د تھے ۔نیسپاک ایک بین الااقوامی سطح پر کام کرنے والا مشاورتی انجینئرنگ کا ادارہ ہے۔ جس کا قیام 1973 میں ایک پرائیویٹ لمیٹڈ کمپنی کے طور پر لایا گیا۔ اس وقت نیسپاک میں 5000 سے زائد ملازمین کام کر رہے ہیں یہ پاکستان کی سب سے بڑی انجینئرنگ مشاورتی کمپنی ہے۔ جبکہ ایشیا کی بڑی کمپنیوں میں سے ایک ہے۔ نیسپاک اپنے اخراجات خود پورے کرتی ہے اب تک نیسپاک نے پاکستان اور بیرونِ ملک 3350 منصوبے مکمل کر لیے ہیں جبکہ 364 منصوبوں پر کام جاری ہے۔ 323 مقامی منصوبے ہیں جبکہ دیگر ممالک میں 41 منصوبوں پر کام جاری ہے۔ صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے نیسپاک کے مینجنگ ڈائریکٹر امجد اے خان نے بتایا کہ نیسپاک حال ہی میں برطانیہ اور دبئی میں رجسٹرڈ ہو چکی ہے۔

جبکہ 2022 میں قطر میں ہونے والے فیفا ورلڈ کپ کے پیشِ نظر کمپنی نے قطر میں اپنے دائرہ کار کو بڑھانے کے لیے کوشیشیں تیز کر دی ہیں۔ اس کے علاوہ نیسپاک نے اردن اور نائجیریا میں ڈیم کے منصوبے جیت لیے ہیں۔ دبئی میں کام کرنے کے لیے نیسپاک کو لائسنس مل گیا ہے۔ جبکہ سری لنکا میں نئے منصوبوں کے حصول کے لیے منصوبہ بندی کی جا رہی ہے۔

مزید : کامرس

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...