دہشتگردی کے خاتمے کیلئے ردالفساد آپریشن کی حمایت کرتے ہیں،اعجاز ہاشمی

دہشتگردی کے خاتمے کیلئے ردالفساد آپریشن کی حمایت کرتے ہیں،اعجاز ہاشمی

لاہور(وقائع نگار) جمعیت علما پاکستان کے مرکزی صدر پیر اعجا ز احمدہاشمی نے کہا ہے کہ دہشت گردی کے خاتمے کے لئے فوج کے ردالفساد آپریشن کی حمایت کرتے ہیں۔ اس آپریشن کو کسی مسلک یا زبان بولنے والے کے خلاف بطور خاص استعمال کرنا افسوسناک ہے۔ پختون پنجابی سرائیکی سندھی بلوچی کی کوئی تفریق نہیں، سب محب وطن اور آپس میں بھائی بھائی ہیں۔ تعصب پھیلانے والوں کے خلاف کارروائی کی جائے، سیاسی جماعتیں بھی قومیتوں کے نام پر سیاست کرکے نفرتیں پیدا کرنے سے گریز کریں اور فیڈریشن کو مضبوط بنائیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے مدینہ منورہ سے جے یو پی کی میڈیا ٹیم سے گفتگو میں کیا۔

جو ان دنوں عمرہ کی سعادت کے سلسلے میں حجاز مقدس میں موجود ہیں اور 3۔ مارچ کو وطن واپسی ہوگی۔ پیر اعجا ز ہاشمی نے کہا کہ آپریشن کو مجرموں کے خلاف ہونا چاہیے، چاہے وہ کسی بھی قومیت یا علاقے سے تعلق رکھتا ہولیکن بعض مارکیٹوں میں تاجر تنظیموں کی طرف سے پٹھانوں کو کوائف جمع کروانے کے احکامات جاری کرنے کی بھر پور مذمت کرتے ہیں۔ اس سے مختلف صوبوں اور زبانیں بولنے والوں کے درمیان تعصب کا تاثر ملتا ہے، جس کے منفی اثرات کا پھر ہمیں لمبے عرصے تک خمیازہ بھگتنا پڑتا ہے۔ ان کا کہنا تھاکہ دہشت گرد کا کوئی مذہب ،مسلک، علاقہ یا زبان نہیں، وہ مجرم ہے، اس لئے ریاستی اداروں کو احتیاط سے کام لینے کی ضرورت ہے۔ پیر اعجاز ہاشمی نے کہا کہ ہمیں انتہا پسندی،دہشت گردی اور تکفیری فکر سے لڑنا چاہئے ، کسی زبان یا مسلک سے نہیں۔ لیکن افسوسناک بات ہے کہ جب بھی دہشت گردی کا کوئی واقعہ ہوتا ہے تو ریاستی ادارے مدارس دینیہ اور پٹھانوں کے خلاف متحرک ہوجاتے ہیں۔اس سوچ کا خاتمہ ہونا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ اسلام اور پاکستان کے خلاف سازشیں کرنے والا بھارت افغانستان کو اپنے مذموم مقاصد کے لئے استعمال کررہا ہے، جس کی وجہ سے دونوں اسلامی ممالک کے درمیان حالات کشیدہ ہورہے ہیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 4