سعودی عرب کے فرمانروا شاہ سلمان انڈونیشیا پہنچ گئے

سعودی عرب کے فرمانروا شاہ سلمان انڈونیشیا پہنچ گئے
سعودی عرب کے فرمانروا شاہ سلمان انڈونیشیا پہنچ گئے

  

جکارتہ(مانیٹرنگ ڈیسک)سعودی عرب کے فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز نے جکارتہ میں انڈونیشی صدر جوکو وِدودو سے آستانہ صدارتی محل میں ملاقات کی ہے اور ان سے دو طرفہ تعلقات ،عالم اسلام کو درپیش مسائل اور اہم عالمی امور کے حوالے سے تفصیلی بات چیت کی ہے۔دونوں رہ نماؤں نے انڈونیشیا اور سعودی عرب کے درمیان تعلقات کا جائزہ لیا اور مختلف شعبوں میں دوطرفہ تعاون بڑھانے کے طریقوں پر تبادلہ خیال کیا ہے۔ملاقات میں سعودی عرب کے اسلامی امور ،دعوت وارشاد کے وزیر شیخ صالح بن عبدالعزیز آل الشیخ ، وزیر مملکت ابراہیم بن عبدالعزیز العساف اور انڈونیشیا کے وزیر خارجہ رتنو لیستری پری انصاری مرسودی بھی موجود تھے۔شاہ سلمان بن عبدالعزیز ایشیائی ملکوں کے ایک ماہ کے طویل دورے پر ہیں۔وہ بدھ کو دوسرے مرحلے میں انڈونیشیا کے بارہ روزہ سرکاری دورے پر جکارتہ پہنچے ہیں جہاں ان کا ہزاروں افراد نے فقیدالمثال استقبال کیا۔ گذشتہ پانچ عشروں میں کسی سعودی شاہ کا دنیا کے بڑے مسلم اکثریتی ملک کا یہ پہلا دورہ ہے اور ان کے ساتھ قریباً ایک ہزار افراد پر مشتمل ایک بڑا وفد بھی آیا ہے۔جکارتہ میں متعیّن سعودی سفیر اسامہ محمد عبداللہ الشعیبی نے قبل ازیں ایک انٹرویو میں بتایا کہ شاہ سلمان 12 مارچ تک انڈونیشیا میں قیام کریں گے اور اس دوران وہ مختصر دورے پر برونائی دارالسلام جائیں گے۔ وہ اپنا زیادہ تر وقت جزیرے بالی میں گزاریں گے۔ انھوں نے مزید بتایا کہ اس موقع پر سعودی عرب اور انڈونیشیا کے درمیان دہشت گردی سے نمٹنے سمیت دو طرفہ تعاون سے متعلق دس سمجھوتے طے پائیں گے۔

مزید : صفحہ آخر