دکیتی کے دو ران پولیس کانسٹیبل کا قتل ، مجرم کو سزائے موت اور 2 لاکھ روپے جرمانہ

دکیتی کے دو ران پولیس کانسٹیبل کا قتل ، مجرم کو سزائے موت اور 2 لاکھ روپے ...

لاہور(نامہ نگار )ایڈیشنل سیشن جج سیف اللہ سوہل نے ڈکیتی کے دوران پولیس کانسٹیبل کو قتل کرنے کے مقدمہ میں ملوث مجرم عبدالستار کو سزائے موت اور2 لاکھ روپے جرمانے کی سزا کا حکم سنا دیا ہے ۔عدالت میں تھانہ چوہنگ پولیس نے ڈپٹی پراسکیوٹر خالد کانجو کی وساطت سے کانسٹیبل تنویر کو قتل کرنے اور3 لاکھ کی رقم لوٹ کر فرار ہونے کے الزام میں چالان پیش کیا۔عدالت میں چالان آنے پر فاضل جج نے ملزم عبدالستار کو جرم ثابت ہونے پر سزائے موت جبکہ ڈکیتی کے دوران رقم لوٹنے پر3، 3 سال قید اور2لاکھ روپے جرمانے کی سزا کا حکم سنایا ہے ،ملزم کے خلاف تھانہ چوہنگ پولیس نے 2012ء میں مقدمہ درج کیا تھا، ملزم پر الزام ہے کہ وہ چوہنگ میں ایک سٹور پر گیا ،جہاں پر اس نے ڈکیتی کی واردات کے دوران3 لاکھ روپے کا کیش اٹھا لیا، اسی دوران کانسٹیبل نے ملزم کو روکنے کی کوشش کی تو اس نے گولی مار کر اسے ہلاک کردیا اور فرار ہوگیاتھا جسے بعد میں پولیس نے سی سی ٹی وی کیمرے کی مدد سے گرفتار کیاتھا۔

مزید : علاقائی