2050ءتک اسلام دنیا کا سب سے بڑا مذہب بن جائیگا : امریکی تحقیقاتی ادارہ

2050ءتک اسلام دنیا کا سب سے بڑا مذہب بن جائیگا : امریکی تحقیقاتی ادارہ
2050ءتک اسلام دنیا کا سب سے بڑا مذہب بن جائیگا : امریکی تحقیقاتی ادارہ

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

نیویارک (ویب ڈیسک)اسلام 2050ءتک دنیا کا سب سے بڑا مذہب بن جائیگا۔ امریکی تحقیقاتی ادارے کے مطابق دنیا میں سب سے زیادہ تیزی سے پھیلنے والا مذہب اسلام اگلے 33 برسوں میں عیسائیت کی جگہ لے گا۔

امریکی تحقیقاتی ادارے پیو ریسرچ سنٹر کی جانب سے کئے گئے سروے کے مطابق اسلام دنیا میں تیزی سے پھیل رہا ہے۔ یہ عیسائیت کے بعد دنیا کا دوسرا بڑا مذہب بن چکا ہے اور 2050ءتک اسلام عیسائیت کی جگہ لے کر پہلے نمبر پر آ جائے گا۔ رپورٹ کے مطابق 2050ءتک مسلمان یورپی آبادی کا دس فیصد جبکہ امریکی آبادی کا 2 اعشاریہ 1 فیصد ہو جائیں گے اور 31 کروڑ مسلمانوں کی تعداد کے ساتھ بھارت پہلے نمبر پر ہو گا۔ دنیا کی آبادی کا 62 فیصد مسلمان ایشیائی ممالک انڈونیشیا، بھارت، پاکستان، بنگلہ دیش، ایران اور ترکی میں بستے ہیں۔

پیور نے انتالیس مسلم ممالک میں شرعی قانون کے نفاذ کے حوالے سے سروے کیا۔ افغانستان میں 99 فیصد، عراق میں 91 فیصد جبکہ پاکستان میں 84 فیصد افراد نے شرعی قوانین کے نفاذ کی حمایت کی۔ 2010ءمیں سامنے آنے والے اعدادوشمار کے مطابق عالمی آبادی میں 23 فیصد حصہ مسلمان ہیں۔

مزید : بین الاقوامی