پشاور میں 10سالہ بچہ کمپیوٹر کا کم عمر ترین لیکچرار بن گیا

پشاور میں 10سالہ بچہ کمپیوٹر کا کم عمر ترین لیکچرار بن گیا
پشاور میں 10سالہ بچہ کمپیوٹر کا کم عمر ترین لیکچرار بن گیا

  

پشاور (ڈیلی پاکستان آن لائن )پشاور میں 10سالہ بچہ کمپیوٹر کی تعلیم کا کم عمر ترین لیکچرا ر بن گیا ۔

دنیا نیوز کے مطابق پانچویں گریڈ کا طالب علم کمپیوٹر کا کم عمر ترین لیکچرار بن گیا جو نجی اکیڈمی میں اپنی عمر سے 2گناہ بڑے طلبا کو تعلیم درے رہا ہے ۔

10سالہ بچے سباوان کو انگریزی ، پشتو ، اردو ، فارسی اور ہندکو سمیت کئی زبانوں پر عبور حاصل ہے جو ایک نجی اکیڈمی میں طلبا کو تعلیم دیکر ماہانہ 24ہزار روپے کمانے لگا ہے ۔ بچے کی ذہانت کو دیکھ کر اساتذہ اور طلبا کے والدین بے حد حیران ہیں جن کا کہنا ہے کہ اتنی چھوٹی عمر میں اللہ نے سباوان کو جس علم اور ذہانت سے نوازا ہے وہ غیر معمولی ہے اور حکومت کو چاہئیے کہ ایسے بچوں کو سپورٹ کرے ۔

مزید : پشاور