اے سی سی اے پاکستان نے 2لاکھ8ہزارممبران کا سنگ میل عبور کر لیا

اے سی سی اے پاکستان نے 2لاکھ8ہزارممبران کا سنگ میل عبور کر لیا

لاہوراے سی سی اے (دی ایسوسیشن آف چارٹرڈ سر ٹیفائیڈ اکاؤنٹنٹس) پاکستان نے 18،19، 21فروری کو کراچی ، لاہور اور اسلام آباد میں منعقد ہونے والی شاندار تقریبات میں نئے ممبران اور اعلی کارکردگی دیکھا نے والے طلبہ کے اعزاز میں تقریبات کا خصوصی اہتمام کیا ۔ جنوری 01،2018سے دسمبر 31،2018کے دوران اے سی سی اے کی ممبر شپ حاصل کرنے والے افراد کے اعزاز میں تقریبات کا ا ہتمام کیا گیا ۔ نئے ممبرز

کے اضافے کے ساتھ 183 ممالک میں اے سی سی اے ممبرز کی تعداد 208,000ہوگئی ہے ۔ تینوں تقریبات کا انعقاد برطانوی ہائی کمیشن کی شراکت داری میں کیا گیا ۔ تقریبات میں حکومتی ، کاروباری اور نجی شعبہ سے تعلق رکھنے والی معروف شخصیات نے شرکت کی جہاں نئے ممبر ز کو سینئر اور ماہرین کے تجربے سے فائدہ حاصل کرنے کا موقع بھی ملا ۔

کراچی میں منعقدہ تقریب میں گورنر سندھ -عمران اسما عیل ، لاہور میں سینیٹر ولید اقبال اور اسلام آباد میں وفاقی وزیر برائے تعلیم - شفقت محمود نے بطور مہمان خصوصی شرکت کی۔

اے سی سی اے کے صدر - Robert Stenhouse، نے نئے منتخب ہونے والے ممبران کو اے سی سی اے کا حصہ بننے پر خوش آمدید کرتے ہوئے کہا '' اے سی سی اے نجی اور عوامی شعبوں کے ساتھ ساتھ مستقبل کی کاروباری حکمتی عملی میں اکاؤنٹنٹس کے اہم کردارکو سمجھتا ہے۔اے سی سی اے تعلیم یافتہ اکاؤنٹنٹس دنیا بھر میں معیشت کو درست سمت طے کرنے میں اہم کردار ادا کر رہے ہیں ۔ ادارے ہماری پیشہ ورانہ مہارت پر یقین رکھتے ہیں ۔ ہمارا تعلیمی معیار دنیا بھر کے اداروں میں مالی ماہرین کی خدمات حاصل کرنے کے موقع پر اولین ترجیح ہوتا ہے ۔ مالی ماہر کا شعبہ اختیار کر کے پا ئیدارترقی کی حکمت عملی اور لیڈر شپ کی صلا حیت حاصل کرنے میں مد د ملتی ہے جو کہ تبدیلی کی جانب اشارہ کرتی ہے ۔ "

اس موقع پر بات کرتے ہوئے اے سی سی اے پاکستان کے ہیڈ - سجید اسلم نے کہا " دنیا کو ایسے مالی ماہرین کی ضرورت ہے جو کہ مشکلات کے حل کی فراہمی ، پائیدار ترقی کی حکمت عملی کی خدمات فراہم کر سکیں ۔ اس شعبہ میں قدم رکھنے کے ساتھ ساتھ ذمہ داری بھی بڑھتی ہے جو کہ کاروبار ، معاشرے اور معیشت پر منحصر کرتی ہے ۔اے سی سی اے ہر اقدام میں عوامی مفاد کو ترجیح دیتا ہے ۔ دنیا بھر میں ہمارے ہر کام مقصد اور نظریہ اس کو درست طریقے سے سر انجام دینا ہوتا ۔ "

سجیداسلم کی تقریر کے دوران اے سی سی اے کا پاکستانی معاشرے اور معیشت کی ترقی کے عزم سے متعلق ویڈیو بھی دیکھائی گئی ۔

ایسوسیشن نے بہترین کارکردگی دکھانے والے ممبرز کو اے سی سی اے کو اقدار کے عین مطابق اپنی خدمات پیش کرنے پرا یڈوکیسی ایوارڈز بھی پیش کیے گئے ۔

اس موقع پر بات کرتے ہوئے اے سی سی اے کے ریجنل ہیڈ آف ممبر آفئیرز - ہارون اے، جان نے کہا " ایڈوکیسی ایوارڈز صر ف بہترین کارکردگی پر نہیں بلکہ اکاؤنٹنٹس کی اگلی نسل کی رہنمائی کے باعث دیا جا تا ہے ۔ "

مزید : کامرس