دہلی کے تشدد زدہ علاقوں میں سکول 7مارچ تک بند رکھنے کا فیصلہ

  دہلی کے تشدد زدہ علاقوں میں سکول 7مارچ تک بند رکھنے کا فیصلہ

  



دہلی (آئی این پی) دہلی کے تشدد زدہ علاقوں میں بچوں کے اسکولوں کو سیکورٹی کے پیش نظر انتظامیہ نے سات مارچ تک بند رکھنے کا فیصلہ، ضلع کے اسکولوں کے لئے سالانہ امتحانات کی نئی تاریخوں کا اعلان جلد ہی کیا جائے گا۔دوسری جانببھارتی میڈیا کے مطابق قومی شہریت (ترمیمی) قانون، این آر سی اور این پی آر کے خلاف شاہین باغ خاتون مظاہرین نے کچھ غیرسماجی طبقوں کے ذریعہ ویڈیو وائرل کرکے شاہین باغ خاتون مظاہرین کو نشانہ بنانے کی دھمکی پر سخت افسوس اور غصے کا اظہار کرتے ہوئے الزام لگایا کہ ایسا محسوس ہوتا ہے کہ ملک میں قانون نام کی کوئی چیز نہیں رہ گئی ہے اور نہ ہی اس کا کوئی خوف ہے۔خاتون مظاہرین نے انتظامیہ پر لاپروائی برتنے کا الزام لگاتے ہوئے کہا کہ اگر اس طرح کی دھمکی کوئی مسلمان دے رہا ہوتا تو درجنوں دفعات کے تحت پولیس اب تک گرفتار کر کے جیل بھیج چکی ہوتی لیکن پولیس نے قانون کے خلاف عمل کرنے والے شرپسند ہندوں کے خلاف اب تک کوئی کارروائی نہیں کی ہے۔واضح رہے کہ شمال مشرقی دہلی کے موج پور، چاند باغ، گوکل پوری، کھجوری سمیت کئی دیگر علاقوں میں گزشتہ ہفتے شہریت (ترمیمی) قانون (سی ایاے) کو لے کر فسادات پھوٹ پڑے تھے جن میں اب تک 42 افراد جاں بحق ہو چکے ہے جبکہ تقریبا 300 زخمیوں کا مختلف اسپتالوں میں علاج چل رہا ہے۔متعدد زخمیوں کی حالت نازک بتائی جاتی ہے۔

مزید : عالمی منظر