امن معاہدے سے خطے میں امن واستحکام آئے گا، مولاناحامد الحق

    امن معاہدے سے خطے میں امن واستحکام آئے گا، مولاناحامد الحق

  



کوٹ ادو (تحصیل رپورٹر)پاکستان دفاع کونسل کے چیئرمین و جمیعت علماء اسلام (س) کے مرکزی امیر مولانا حامدالحق حقانی نے کہا ہے کہ طالبان امریکا مذاکرات(بقیہ نمبر41صفحہ12پر)

معاہدہ خوش آئند اور اس سے خطے میں امن و استحکام آئے گا،ملک بحرانوں کا شکار اور قوم مایوسی کی طرف جارہی ہے،ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز کوٹ ادو میں جی یو آئی کے امیر حاجی بشیر احمد زر گر کی رہائشگاہ پر صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے کیا، انہوں نے کہا کہ طالبان امریکہ مذاکرات کی کامیابی سے خطے میں امن قائم ہوگا اور خونریزی سے بچنے کا بھی یہی موقع ہے طالبان کو افغانستان پر امن حکومت قائم کرنے دی جائے،انہوں نے کہا کہ اس وقت پورا ملک مسائل و مشکلات میں گھرا ہوا ہے،مہنگائی بیروزگاری سے پوری قوم متاثرہورہی ہے اور حکومت مسائل حل کرنے میں ناکام ہوگئی ہے،انہوں نے کہا کہ بھارت مسلمانوں پر مظالم کرنا بند کرے، انہوں نے کہا کہ دینی مدارس میں حکومتی مداخلت کو برداشت نہیں کریں گے،اس موقع پر جمیعت علماء اسلام کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات سید یوسف شاہ،جمعیت علماء اسلام کوٹ ادو کے جنرل سیکرٹری مرزا عبدالغفار،صوبائی سیکرٹری محمد احمد مغل، ملک رحیم الدین،شرجیل احمد، ایم ٹی شیخ و دیگر بھی موجود تھے،بعد ازاں وہ جنوبی پنجاب کی معروف دینی درسگاہ جامعہ مظاہرالعلوم کوٹ ادو بھی گئے جہاں معروف عالم دین و بزرگ رہنما مولانا مفتی عبدالجلیل اور مولانا اشفاق قاسمی سے ملاقات کی ملکی مسائل و علاقائی صورتحال پر بات چیت کی۔

دورہ

مزید : ملتان صفحہ آخر