وفاق المدارس تعلیمی نیٹ ورک کے تحفظ کیلئے چھتری ہے،مولانا حسین احمد

  وفاق المدارس تعلیمی نیٹ ورک کے تحفظ کیلئے چھتری ہے،مولانا حسین احمد

  



پشاور (سٹاف رپورٹر)مدارس نے ہمیشہ ملک کی شرح خواندگی بڑھانے میں حکومت کا ہاتھ بٹایاہے۔پورے ملک میں اس سال وفاق المدارس کے زیرانتظام چلنے والے مدارس میں 80ہزار حفاظ تیار ہوئے، جب کہ وفاق کے قیام سے اب تک حفاظ کی تعداد بارہ لاکھ ستتر ہزار (12,77,000)ہے۔دنیا کے کسی اور ملک میں اتنی تعداد میں حفاظ تیار نہیں ہورہے۔ پاکستان دنیا بھر میں سب سے زیادہ حفاظ تیار کرنے والا ملک ہے۔یہ پاکستان کے لیے ایک بہت بڑا اعزاز ہے۔ان خیالات کا اظہار وفاق المدارس صوبہ خیبر پختونخوا کے ناظم مولانا حسین احمد نے وفاق کے شعبہ حفظ امتحانات کے حوالے سے مختلف مدارس سے آئے ہوئے علماء اورقراء کے اعلی سطحی اجلاس سے خطاب کے دوران کیا۔ انہوں نے کہا کہ وفاق المدارس بین الاقوامی ادارہ بن چکا ہے اور مدارس کے اتحاد و اتفاق کی علامت ہے۔ دینی مدارس کی حریت وآزادی پر کسی قسم کا کوئی سمجھوتہ کرنے کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا۔مدارس کا تحفظ یک نکاتی ایجنڈا ہے۔ وفاق المدارس نے اب تک اس حوالے سے کسی قسم کی کمزوری اور لچک کا مظاہر ہ کیا ہے اور نہ کرے گا۔ دینی مدارس کے خلاف تمام ترسازشیں ناکام بنادی جائیں گی۔ انہوں نے مزید کہا کہ رجسٹریشن اس ملک کا قانون ہے۔ ہم نے کبھی بھی اس سے انکارنہیں کیا ہے۔ ہم ملک کے پرامن شہری ہیں۔ بینک اکاونٹ کھولنے کے لیے جو شرائط ہیں وہ ناقابل تسلیم ہیں۔ کیوں کہ ان میں بعض ایسی شرائط ہیں جن کا سیدھا مطلب یہی نکلتا ہے کہ مدارس کو بند کیاجائے۔ دینی مدارس کا وزارت تعلیم کے ساتھ رجسٹریشن کے لیے مختلف اضلاع میں ریجنل دفاتر قائم کرنے کا معاہدہ ہوا ہے۔ معاہدہ میں یہ طے پایا تھا کہ ان دفاتر کا کام صرف مدارس کی رجسٹریشن کے ساتھ ہوگا۔ لیکن ابھی تک ایک بھی ریجنل دفتر کا قیام عمل میں نہیں لایا گیا ہے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر