جے ٹی آئی ملاکنڈکے زیراہتمام نظام مصطفیؐ یوتھ کنونشن کاانعقاد

  جے ٹی آئی ملاکنڈکے زیراہتمام نظام مصطفیؐ یوتھ کنونشن کاانعقاد

  



سخاکوٹ(نمائندہ پاکستان) سیدراجیوڑدرگئی میں جمعیت طلباء اسلام ملاکنڈکے زیراہتمام نظام مصطفی ﷺ یوتھ کنونشن کاانعقاد،تقریب کے مہمان خصوصی جے یوآئی کے صوبائی رہنمامولانا آمانت شاہ جبکہ دیگرمہمانان گرامی میں جمعیت طلباء اسلام کے صوبائی جنرل سیکرٹری خیبرپختونخواحافظ عادل شاہ،جے یوآئی ملاکنڈکے ضلعی جنرل سیکرٹری مولاناسلمان تاثیر،مولانامعراج الحق صفدر،مولاناحضرت محمدحقانی ودیگر علماء کرام شامل تھے،اس موقع پر جمعیت طلباء اسلام ضلع ملاکنڈکے جنرل سیکرٹری مولاناحبیب الرحمن،نائب صدرندیم احمداخونزادہ،مولانابصیرالحق حقانی ودیگرمنتظمین نے مہمان گرامی اوردیگرکاپرتپاک استقبال کیا،تقریب سے خطاب کرتے ہوئے مہمان خصوصی مولاناآمانت شاہ،حافظ عادل شاہ،مولاناسلمان تاثیرودیگر نے کہاکہ آج کے اس نظام مصطفی ﷺیوتھ کنونشن کامقصدنوجوانان اوربالخصوص اسلامی مدرسوں سمیت عوام الناس میں یہ شعوربیدارکرناہے کہ اسلامی عقائد ونظریات کے مطابق نظام مصطفی کیلئے عملی جدوجہدکاوقت آگیاہے جس کیلئے ہرکارکن جمعیت کاپیغام گھرگھرپہنچائیں تاکہ اس بابرکت مقصدکو حاصل کرنے میں کوئی دشواری نہ ہو،انہوں نے کہاکہ جمعیت طلباء اسلام پاکستان کے بنیادی پروگرامات میں شامل نکات سے واضح ہے کہ اس دہرتی پر امن وخوشحالی کاواحدراستہ نظام مصطفی کی پیروی ہے جس کی روسے تعلیمات نبویﷺؑ کی روشنی میں ایک ایساپاکیزہ معاشرہ تشکیل دیناہوجوکہ پوری قوم اورانسانیت کو گمراہی سے نکال کر راہ حق پر لاسکے،اسلامی اقدارکااحیاء اوراسلام کے صحیح عقایدونظریات کی تبلیغ واشاعت کی مزیدپھیلاؤ،دینی اورفنی علوم کے محصلین ایکدوسرے سے قریب ہوکردشمنان اسلام کی پیداکردہ تفرقے اورنفرت انگیزماحول کوختم کرنا، موجودہ نظام تعلیم کو یکسربدل کراسلامی،سائنسی اورفنی خطوط پر استوارکرنا،طلباء کے جملہ تعلیمی ودیگر مسائل کو آئین وقانون وضابطہ اخلاق کے اندررہتے ہوئے حل کرنااوراسکے ساتھ ساتھ تعلیمی میدان میں بے سہارہ،یتیم،غریب ونادارطلباء کی مالی وجانی معاونت کرناشامل ہیں،انہوں نے کہاکہ اس پیغام کو گلی گلی اورگھرگھرپہنچاناہم سب کی اولین ذمہ داری ہے تاکہ پیارے ملک پاکستان میں نظام مصطفی ﷺ کی دستورلانے میں کارگرثابت ہو،مقررین نے کہاکہ اسلامی مدرسے انسانیت کی درس دیتے ہیں انہیں بری نگاہ سے دیکھنے والوں کاانجام اورحشردنیادیکھ چکی ہے،جوکہ مزیدبھی ذلیل ورسواہونگے۔انہوں نے کہاکہ موجودہ صوبائی ومرکزی حکومت عوام سے کئے گئے وعدے نبھانے اورانکے جائز حقوق دلوانے میں مکمل طورپرناکام ہوچکے ہیں اورانہیں مزیدحق حکمرانی حاصل نہیں۔

مزید : پشاورصفحہ آخر