’ہمارے شہریوں کے جسم کے اس حصے سے کورونا ٹیسٹ کے لیے سیمپل لینا بند کرو‘ جاپان نے چین سے شکایت کردی

’ہمارے شہریوں کے جسم کے اس حصے سے کورونا ٹیسٹ کے لیے سیمپل لینا بند کرو‘ ...
’ہمارے شہریوں کے جسم کے اس حصے سے کورونا ٹیسٹ کے لیے سیمپل لینا بند کرو‘ جاپان نے چین سے شکایت کردی

  

ٹوکیو(مانیٹرنگ ڈیسک) جاپان نے چین کو اپنے شہریوں کی ’مقعد‘ سے کورونا ٹیسٹ کے لیے نمونے نہ لینے کا مطالبہ کر دیا۔برطانوی نشریاتی ادارے کے مطابق چین میں داخل ہونے والے غیرملکیوں کے کورونا ٹیسٹ کے لیے نمونے لیے جاتے ہیں۔ پہلے یہ نمونے گلے اور ناک وغیرہ سے لیے جاتے تھے تاہم اب چین میں مقعد سے بھی نمونے لیے جا رہے ہیں۔ اس کی وجہ چینی سائنسدانوں کی ایک تحقیق ہے جس میں ثابت کیا گیا ہے کہ مقعد سے لیے گئے نمونے سے ہونے والے ٹیسٹ کے نتائج گلے اور ناک وغیرہ سے لیے گئے نمونوں کی نسبت کہیں زیادہ درست اور حتمی ہوتے ہیں۔

بیجنگ میں کورونا وائرس کے حالیہ پھیلاﺅ کے دوران بھی شہریوں سے نمونے مقعد سے لیے گئے تھے اور ایئرپورٹس و دیگر انٹری پوائنٹس پر بھی نمونے مقعد ہی سے لیے جا رہے ہیں تاہم جاپان نے اسے ہتک آمیز سلوک قرار دیتے ہوئے چین سے مطالبہ کر دیا ہے کہ وہ چین جانے والے جاپانی شہریوں کے کورونا ٹیسٹ کے نمونے مقعد سے لینا بند کرے، اس کی بجائے گلے اور ناک سے ان کے نمونے لیے جائیں۔

مزید :

بین الاقوامی -کورونا وائرس -