کیا آپ کو معلوم ہے کہ یہ سونے کا رنگ ایک اصلی انسان کے جسم پر چڑھایا جارہا ہے ، یہ کون ہے؟ جان کر آپکی حیرت کی بھی انتہا نہ رہے گی

کیا آپ کو معلوم ہے کہ یہ سونے کا رنگ ایک اصلی انسان کے جسم پر چڑھایا جارہا ہے ، ...
کیا آپ کو معلوم ہے کہ یہ سونے کا رنگ ایک اصلی انسان کے جسم پر چڑھایا جارہا ہے ، یہ کون ہے؟ جان کر آپکی حیرت کی بھی انتہا نہ رہے گی

  


ایمسٹرڈیم(مانیٹرنگ ڈیسک) مصر کے فراعین کی ممیوں کے متعلق تو آپ نے سن رکھا ہو گا۔ آپ یہ جان کر حیران ہوں گے کہ یہ رسم تاحال جاری و ساری ہے۔ شنگھائسٹ کی رپورٹ کے مطابق گزشتہ چند ماہ میں نیدرلینڈز میں ایک بدھ راہب کی لاش کو حنوط کرکے اس پر سونے کا پانی چڑھایا گیا تھا۔ یہ اپنی نوعیت کا پہلا واقعہ نہیں ہے بلکہ زمانہ قدیم میں بھی بدھ راہبوں کی لاشیں حنوط کرکے ان پر سونے کا پانی چڑھانے کا رواج ہے۔ گزشتہ سال ایک میڈیکل ٹیم نے ایک بدھ راہب کی 1100ءمیں حنوط کی گئی لاش کی باقیات دریافت کی تھیں جس پر سونے کا پانی چڑھایا گیا تھا۔ 2012ءمیں بھی ”فوہاﺅ“(Fu Hou) نامی ایک بدھ راہب کی لاش حنوط کرکے محفوظ کر لی گئی تھی ۔ اس راہب کی موت 94سال کی عمر میں ہوئی تھی۔

فو ہاﺅ بہت بڑا بدھ راہب تھا جس کے عقیدت مندوں کی تعداد لاکھوں میں تھی۔ وہ 17سال کی عمر سے ایک راہب کی زندگی بسر کر رہا تھا۔ رپورٹ کے مطابق اب اس کی لاش پر سونے کا پانی چڑھانے کا کام شروع کر دیا گیا ہے۔ یہ کام مکمل ہونے کے بعد اسے شیشے کے کیس میں ڈال کر ایک پہاڑ کی چوٹی پر رکھ دیا جائے گا تاکہ لوگ ہمیشہ کے لیے اس کی پوجا کر سکیں۔ رپورٹ کے مطابق بدھ مت کے ان راہبوں کی لاشیں محفوظ کرکے ان پر سونے کا پانی چڑھانے کا مقصد بھی یہی ہوتا ہے کہ انہیں دائمی طور پران کے مریدین کے درمیان رکھا جا سکے اور وہ ان کی پوجا کر سکیں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس