خاتون کو قتل، 9 ماہ کی بچی کو چندے میں دینے والا ملزم گرفتار

خاتون کو قتل، 9 ماہ کی بچی کو چندے میں دینے والا ملزم گرفتار
 خاتون کو قتل، 9 ماہ کی بچی کو چندے میں دینے والا ملزم گرفتار

  


پشاور (ویب ڈیسک) حیات آباد پولیس نے خاتون کو قتل کر کے اس کی نو ماہ کی بچی کو مسجد کے چندے میں جمع کروانے والے سفاک ملزم کو گرفتار کر لیا۔ تھانہ پشتخرہ میں پریس بریفنگ کے دوران اے ایس پی حیات آباد کا کہنا تھا کہ ایک ماہ قبل خان شیہر نامی شخص نے ایف آئی آر درج کرائی تھی کہ اس کی بہن اور اس کی نو ماہ کی بیٹی تمنا پراسرار طور پر لاپتہ ہیں۔ پولیس نے کارروائی کا آغاز کیا تو خاتون کے شوہر اور سوتیلے بیٹے نے گرفتاری دیدی جبکہ ایک ملزم گوہر کو جب گرفتار کیا گیا تو علم ہوا کہ خاتون کو قتل کر کے اس کی بیٹی کو مسجد کے چندے میں جمع کرا دیا گیا تھا۔ مقتولہ کے بھائی خان شیر کا کہنا تھا کہ اس کا بہنوئی اس کی بہن کو تشدد کا نشانہ بنایا کرتا تھا اور قتل میں بھی اس کا بہنوئی ملوث ہے۔ مدعی کے مطابق اس کی بہن کو جائیداد ہتھیانے کے لئے قتل کیا گیا۔خاتون کو غیرت کے نام پر قتل کیا گیا یا جائیداد ہتھیانے کے لئے لیکن اس قتل کے سبب تین معصوم اپنی جنت سے محروم ہو کر رہ گئے ہیں اور ان کی آنکھوں سے ماں کی محرومی چھلکتی واضح دکھائی دیتی ہے۔

مزید : پشاور