ہائی کورٹ:سائیلین کے لئے رکھے گئے بنچوں میں کھٹمل پرورش پانے لگے

ہائی کورٹ:سائیلین کے لئے رکھے گئے بنچوں میں کھٹمل پرورش پانے لگے
ہائی کورٹ:سائیلین کے لئے رکھے گئے بنچوں میں کھٹمل پرورش پانے لگے

  


لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائیکورٹ کی انتظامیہ کی غفلت کی وجہ سے سائلین اور وکلائکی سہولت کے لئے رکھے گئے بنچوں میں کھٹملوں کی افزائش زور وشور سے جاری ہے، کھٹملوں کی وجہ سے عدالت عالیہ سے رجوع کرنے والے سائلین اور وکلائخارش جیسی بیماریوں میںمبتلا ہونے لگے۔لاہور ہائیکورٹ میں روزانہ کی بنیاد پر ہزاروں سائلین اور وکلائاپنے مقدمات کی پیروی کے لئے آتے ہیں، وکلائاور سائلین کی سہولت کے لئے عدالت عالیہ میں100 کے قریب بنچ رکھے ہوئے ہیں، ہائیکورٹ انتظامیہ کی غفلت کی وجہ سے ان بنچوں میں کھٹملوں کی افزائش زور وشور سے جاری ہے،بنچوں کے اوپر ایک مرتبہ بیٹھنے والے سائل یا وکیل چند منٹ بعد ہی خارش کرتا نظر آتا ہے، کٹھملوں کے کاٹنے کی وجہ سے سائلین اور وکلائخارش سمیت جلد کی دیگر بیماریوں میں مبتلا ہو رہے ہیں، سائلین اور وکلائکا کہنا ہے کہ عدالت عالیہ میں بہتر سہولیات فراہم کرنا ہائیکورٹ انتظامیہ کی ذمہ داری ہے، کھٹملوں کو قابو کرنے کے لئے سپرے استعمال کئے جا سکتے ہیں لیکن ہائیکورٹ انتظامیہ کی طرف سے روایتی سست برتی جا رہی ہے اور سائلین اور وکلائکو کھٹملوں کو رحم و کرم پر چھوڑ دیا گیا ہے۔

مزید : لاہور