نواز شریف اور زرداری ملک پر بوجھ ‘ عوام دونوں کو مسترد کردیں‘ مصطفی کھر

نواز شریف اور زرداری ملک پر بوجھ ‘ عوام دونوں کو مسترد کردیں‘ مصطفی کھر

کوٹ ادو( تحصیل رپورٹر) سابق گورنر و سابق وزیر اعلی پنجاب‘ پاکستان تحریک انصاف کے رہنما ملک غلام مصطفی کھر نے کہا ہے کہ پانامہ لیکس پر ججوں کے فیصلے سے قوم کو مایوسی ہوئی ہے ۔ سپریم کورٹ کے 3ججوں نے جے آئی ٹی کو تفتیش کا کہا ہے۔ جے آئی ٹی میں اتنی جرات نہیں کہ وہ وزیر اعظم کو نا اہل قرار دے تاہم کور کمانڈر کانفرنس سے پر امید ہوں کہ وہ انصاف پر مبنی فیصلے کرے گی ۔ زندگی (بقیہ نمبر35صفحہ7پر )

میں کئی نشیب و فراز دیکھے ہیں ۔ ذوالفقار علی بھٹو کے بعد عمران خان ہی پاکستانیوں کی واحد امید ہیں۔ وہ گزشتہ روز اپنے آبائی گاؤں دڑا کھر غربی میں میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کر رہے تھے۔ ملک غلام مصطفی کھر نے کہا کہ وہ 2018سے پہلے الیکشن دیکھ رہے ہیں۔ وزیر اعظم میاں نواز شریف فوراً مستعفی ہوں۔ انہوں نے کہا کہ اگلے الیکشن میں مسلم لیگ (ن) کا صفایا ہو جائے گا اور عمران خان آئندہ الیکشن میں بھاری اکثریت سے جیتیں گے۔ انہوں نے کہا کہ میاں نواز شریف اور آصف علی زرداری ملک پر بوجھ ہیں ۔ ملک اب انکا بوجھ نہیں اٹھا سکتا ۔ عوام سیاسی شعور کا ثبوت دے کر دونوں کرپٹ پارٹیوں کو مسترد کر دیں۔ ملک غلام مصطفی کھر نے کہا کہ آج ملک کی حالت انتہائی ابتر ہے تمام سرکاری محکمے اور حکمران کرپٹ ہیں ۔ ہمارے کرپٹ لیڈروں کی وجہ سے بیرون ملک پاکستانیوں کو حقارت سے دیکھا جاتا ہے ۔ ملک کو کرپشن کی وبا سے نکالنے کے لئے عوام عمران خان کا ساتھ دیں۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان انتہائی دلیر بہادر سیاستدان ہیں اور نوجوانوں کے حقیقی نمائندہ ہیں ۔ قوم نواز شریف یا زرداری کی بجائے عمران خان کی طرف دیکھ رہی ہے ۔ عوام ان کرپٹ عناصر کا محاسبہ کر کے حقیقی لیڈر کا انتخاب کریں ۔انہوں نے کہا کہ ملک میں چور ڈاکوں اور لٹیروں کا راج ہے 90فیصد عوام نواز شریف کو کرپٹ قرار دے چکی ہے ۔ سپریم کورٹ نے بھی وزیر اعظم کو کلین چٹ نہیں دی ۔ انہوں نے تجویز دی کہ الیکشن کمیشن میں اصلاحات لا کر ایسا قانون بنایا جائے کہ کسی بھی سرمایہ دار کو 10سال تک الیکشن میں حصہ لینے پر پابندی ہو جب تک وہ ملک میں اپنا سرمایہ واپس نہ لائے ۔ ملک غلام مصطفی کھر نے کہا کہ ملک میں چار فوجی انقلاب لائے گئے ‘یحیےٰ خان ‘ ایوب خان‘ ضیاء الحق‘ پرویز مشرف لیکن وہ بھی ملک میں کرپشن ختم نہ کر سکے بلکہ انکیدور میں ملک کا وقار بھی ختم ہو گیا۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان سچے اور با کردار لیڈر ہیں اس لئے وہ انکی پارٹی میں شامل ہوئے ہیں۔ مقبولیت کے لحاظ سے بھی عمران خان پہلے نمبر پر ہیں جہانگیر ترین ‘ پرویز خٹک‘ اسحاق خاکوانی‘ نواب زادگان کے اسرار پر تحریک انصاف میں شامل ہوئے ہیں ۔ وہ تحریک انصاف کے کارکنوں کو اپنی اولاد سمجھتے ہیں۔ کارکن پارٹی کا سرمایہ ہوئے ہیں۔ انشاء اللہ وہ کارکنوں کے شانہ بشانہ ساتھ چلیں گے۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ وہ پاکستان تحریک انصاف میں غیر مشروت طور پر شامل ہوئے ہیں ۔ اگر پارٹی نے ٹکٹ دیا تو وہ الیکشن لڑیں گے۔ ملک غلام مصطفی کھر نے مزید کہا کہ وہ ذوالفقار علی بھٹو کے شاگرد ہیں ۔ انکے سینے میں کئی سیاسی راز دفن ہیں ۔ حقیقی اپوزیشن لیڈر عمران خان اور طلسماتی شخصیت ہیں وہ کرپشن کے خلاف جہاد کر رہے ہیں۔ انشاء اللہ آئندہ الیکشن میں پاکستان تحریک انصاف کی حکومت ہو گی۔ ایک سوال کے جواب میں ملک غلام مصطفی کھر نے کہا کہ جب وہ گورنر تھے تو لوگ سکون کی نیند سوتے تھے ۔پنجاب کے عوام نواب آف کالا باغ اور میرے دور کو اب بھی یاد کرتی ہے ۔ اس موقع پر ملک غلام مرتضیٰ کھر ‘طاہر سلطان میلادی کھر‘ ڈاکٹر عمر فاروق بلوچ’ سرائیکی شاعر منظور سیال ‘ جنرل کونسلر یار محمد چانڈیہ ‘ اللہ یار‘ ملک عابد رڈ ‘مجید رڈ‘ ملک شاہد ارائیں‘ علی مشوری ‘ ڈاکٹر یاسین’ میاں ثقلین‘ آصف بورانہ‘ عذیر مشوری ’ محبت خان لنگاہ سمیت پی ٹی آئی کے دیگر کارکنوں کی بڑی تعداد موجود تھی۔

مزید : ملتان صفحہ آخر