الیکٹرک گاڑی بنانے والی کمپنی ٹیسلا کے مالک کی ایک ٹویٹ نے اربوں ڈالر کا نقصان کروادیا

الیکٹرک گاڑی بنانے والی کمپنی ٹیسلا کے مالک کی ایک ٹویٹ نے اربوں ڈالر کا ...
الیکٹرک گاڑی بنانے والی کمپنی ٹیسلا کے مالک کی ایک ٹویٹ نے اربوں ڈالر کا نقصان کروادیا

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) الیکٹرک گاڑیاں بنانے والی کمپنی ٹیسلا کے مالک اور چیف ایگزیکٹو آفیسر ایلن مسک کی ایک ٹویٹ نے ان کی کمپنی کو اربوں ڈالر کا نقصان پہنچا دیا۔ سی این این کے مطابق دو روز قبل ایلن مسک نے ایک فقرے پر مشتمل اپنی ٹویٹ میں کہا کہ ”ٹیسلا کے حصص کی قیمت بہت زیادہ ہے۔“ یہ ٹویٹ سامنے آنے کی دیر تھی کہ سٹاک مارکیٹ میں ٹیسلا کے حصص کی قیمت گرنی شروع ہو گئی اور اب تک کمپنی کو اربوں ڈالر کا نقصان پہنچ چکا ہے۔

رپورٹ کے مطابق جب ایلن مسک نے ٹویٹ کی اس وقت ٹیسلا کے حصص کی قیمت 760ڈالر فی حصص پر تھی۔ ٹویٹ کے بعد چند منٹوں میں ہی حصص کی قیمت 700ڈالر پر آ گئی اور اگلے چند گھنٹوں میں اس میں 8فیصد سے زائد کمی آ چکی تھی۔ اس ٹویٹ سے قبل ایلن مسک نے پے درپے کئی ٹویٹس کیں جن میں انہوں نے خلاف توقع باتیں کہیں۔ انہوں نے لکھا کہ ”جو بھی مادی چیزیں میری ملکیت میں ہیں میں وہ سب فروخت کرنے جا رہا ہوں، حتیٰ کہ میں اپنا گھر بھی بیچ ڈالوں گا اور کوئی گھر میری ملکیت میں نہیں ہو گا۔“

اس کے بعد انہوں نے امریکی قومی ترانے کے مصرعے بھی ٹویٹ کیے اور اگلی ٹویٹ میں لکھا کہ ”اب لوگوں کو ان کی آزادی واپس کر دو۔“ اس کے بعد انہوں نے ایک ٹویٹ میں کہا کہ ”میری گرل فرینڈ مجھ پر برس رہی ہے“۔ واضح رہے کہ معروف پاپ سنگر گرائمز ایلن مسک کی گرل فرینڈ ہے۔ کارپوریٹ لاءکے پروفیسر جان کافی کا کہنا تھا کہ ”اگرچہ کسی کمپنی کے سی ای او کی طرف سے یہ اعتراف کرنا بہت عجیب ہے کہ اس کی کمپنی کے حصص کی قیمت بہت زیادہ ہے تاہم میں نہیں سمجھتا کہ اس اعتراف کی وجہ سے ٹیسلا کے حصص کی قیمت گری ہے۔“

مزید :

بین الاقوامی -