چیف جسٹس کی ریٹائرمنٹ تک نئے ججوں کا تقرر روک دیا جائے،سپریم کورٹ بار

چیف جسٹس کی ریٹائرمنٹ تک نئے ججوں کا تقرر روک دیا جائے،سپریم کورٹ بار

لاہور(نامہ نگار خصوصی )سپریم کورٹ بار کے نومنتخب صدر نے مطالبہ کیا ہے کہ چیف جسٹس پاکستان مسٹر جسٹس افتخار محمد چودھری کی ریٹائرمنٹ تک اعلی عدلیہ میں نئے ججوں کا تقرر روک دیا جائے۔وہ گزشتہ روز لاہور ہائی کورٹ میں صحافیوں سے گفتگو کررہے تھے ۔کامران مرتضی نے مزیدکہا کہ ڈرون حملے جنگی جرائم ہیں،ڈرون حملے رکوانے کے لئے حکومت عالمی عدالت انصاف سمیت ہر عالمی فورم سے رجوع کرے۔ سپریم کورٹ بار کے نومنتخب صدر کامران مرتضی نے کہا کہ لاپتہ افراد کی بازیابی تک بلوچستان کا مسئلہ حل نہیں ہو سکتا بلوچوں کا احساس محرومی ختم کرنے اور انہیں حقوق دلانے کے لئے سپریم کورٹ بار کل جماعتی کانفرنس بلانے پر غور کر سکتی ہے۔ کامران مرتضی کا کہنا تھا کہ چیف جسٹس آف پاکستان کی ریٹائرمنٹ تک مزید نئے ججز تعینات نہیں ہونے چاہئیں۔ججزتعیناتیوں کے حوالے سے وکلاءمیں پہلے ہی تشویش پائی جا رہی ہے۔بار کی عزت بنچ سے ہے عدلیہ کے ہر اچھے کام میں اسکے ساتھ ہوں گے۔انہوں نے کہا کہ عدلیہ کے بہت سارے معاملات پر وکلاءکے تحفظات ہیں جنہیں دور نہ کیا گیا توہم اپنا لائحہ عمل طے کریں گے

مزید : صفحہ آخر