دھرنوں سے اقتصادی سرگرمیوں پر منفی اثرات مرتب ہو رہے ہیں

دھرنوں سے اقتصادی سرگرمیوں پر منفی اثرات مرتب ہو رہے ہیں

لاہور(کامرس رپورٹر)سیاست دان انگلی اٹھنے کے انتظار میں خلفشار پیدا کرکے کاروباری حالات خراب نہ کریں ترقیاتی منصوبے مکمل کرنے میں حکومت کو خوشدلانہ تعاون پیش کریں تاکہ ملک کو مضبوطی اور عوام کو خوشحالی سے ہمکنار کیا جا سکے۔لاہور چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے ایگزیکٹو ممبر ملک طاہرجاوید نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ دارلحکومت میں دھرنوں حکومت گرانے کے نعروں اور دعووں سے اقتصادی سرگرمیوں پر منفی اثرات مرتب ہو رہے ہیں ملک طاہر جاوید نے کہا ہے کہ دشمن کا یہی ایجنڈا ہے کہ سرمایہ کار پاکستان کا رخ نہ کریں اور اندرون ملک کاروباری سرگرمیاں سست روی کا شکار ہو جائیں اس لیے ملک طاہر جاوید نے کہا ہے سیاست دان اپنی حرکتوں سے ملکی معیشت کو تباہی و بربادی سے دوچار روزگار کے مواقع محدود و مسدود اور معاشرے میں بھوک افلاس بڑھانے کے اسباب پیدا نہ کریں حکومت عوام کے ووٹوں سے ملے گی اور ووٹ خدمت کرنے سے ملیں گے۔

انہوں نے کہا ہے کہ سیاست دانوں نے 2014 کے دوران اسلام آباد میں طویل دورانیہ کا دھرنا دیا کاروباری حالات میں اس قدر مندی پیدا کردی کہ اسلام آباد کے تاجروں کو احتجاج کرنا پڑا کہ دھرنا ختم کر دیا جائے سیاست دان ہر روز کنٹینر پر کھڑا ہو کر امپائر کی انگلی اٹھنے کا اعلان کرتے انگلی نہ اٹھی سیاست دان خود اٹھ گئے ملک طاہر جاوید نے کہا ہے کہ اسلام آباد میں دھرنا دے کر اپنی تقریروں کے ذریعے سی پیک منصوبہ کو متنازعہ قرار دینے کی کوششیں ہو رہی ہیں ملک طاہر جاوید نے کہا ہے کہ نریندر مودی بیرون ملک گوادر بندرگاہ کو ناکام اور سی پیک منصوبے کو معطل کرنے کی جد و جہد کر رہے ہیں ملکی سیاست دان اندرون ملک بڑے ترقیاتی منصوبوں کو متنازعہ اور کاروباری حالات خراب کرنے کی کوششیں کر رہے ہیں جو کسی طور حب الوطنی نہیں ہو سکتا اس لیے ملک طاہر جاوید نے دھرنا سیاست دانوں پر زور دیا ہے کہ اسلام آباد گھیراو چھوڑ یں اور ملکی معیشت میں بہتری کے لیے تعمیر سرگرمیوں پر اپنا وقت او ر صلاحیتیں لگائیں

مزید : کامرس