انگلش ٹیم کی انڈیا کے خلاف کارکردگی زیادہ اہم ہے ٗ آئن بوتھم

انگلش ٹیم کی انڈیا کے خلاف کارکردگی زیادہ اہم ہے ٗ آئن بوتھم

لندن (این این آئی)انگلینڈ کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان آئن بوتھم نے کہا ہے کہ ٹیم کو بنگلہ دیش کے خلاف شکست کے بجائے بھارت کیخلاف 5 میچوں کی سیریز میں کارکردگی کے بعد پرکھا جائیگا۔انگلینڈ کو بنگلہ دیش کے ہاتھوں سیریز کے دوسرے ٹیسٹ میں 108 رنز سے شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا جہاں بغیر کسی نقصان کے 100 رنز بنانے کے بعد تمام بلے باز صرف 64 رنز کا اضافہ کرپائے تھے ٗبنگلہ دیش نے انگلینڈ کو تاریخی شکست دینے کے بعد دومیچوں کی سیریز کو 1۔1 سے برابر کردیا تھا جبکہ کپتان کک نے بنگلہ دیش کی وکٹ پر ناتجربہ کاری کا اعتراف بھی کیا تھا۔انگلینڈ ٹیم کی بنگلہ دیش کے خلاف شکست کے بعد بھارت میں روی چندرن ایشون کی موجودگی میں ایک مضبوط باؤلنگ کے خلاف کارکردگی پر سوالات اٹھائے جارہے ہیں تاہم بوتھم اس کو کھیل کا حصہ قرار دے رہے ہیں۔آئن بوتھم نے انگلینڈ ٹیم کی ناقص بلے بازی پر کہا کہ دنیا کے اس حصے میں ہوسکتا ہے۔انہوں نے کہاکہ وکٹ اسپنرز کے لیے تراشی گئی تھیں، جب ٹیسٹ میں اسپنر نئی گیند کے ساتھ آغاز کریں گے تو سمجھ لیں کہ آگے کیا ہوگا۔سابق آل راؤنڈر نے کہا کہ یہ ان (بنگلہ دیش) کیلئے اچھا تھا لیکن انھیں اپنے ملک سے باہر بھی فتوحات کا آغاز کرنا ہے اور انگلینڈ کیلئے یہ ایک امتحان تھاٹیم کی کارکردگی کے حوالے سے کئے جانے والے تجزیوں پر روشنی ڈالتے ہوئے انھوں نے کہا کہ آخر میں ان کا جائزہ بنگلہ دیش کے ساتھ ہونے والے میچ سے اتنا ہم نہیں ہوگا لیکن جو کچھ بھارت میں ہوگا وہ زیادہ اہم ہوگا۔انگلینڈ کی ٹیم ہندوستان کے خلاف 5 ٹیسٹ میچوں کی سیریز کھیلے گی جہاں ٹیم کی مدد کیلئے پاکستان کے سابق آف اسپنر ثقلین مشتاق کی خدمات حاصل کرلی گئی ہیں۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی