الطاف حسین کی امریکہ روانگی کی تیاریاں

الطاف حسین کی امریکہ روانگی کی تیاریاں

کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک) بانی متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) الطاف حسین امریکہ روانگی کی تیاری کر رہے ہیں اور امریکی صدارتی انتخابات کے بعد جلد ہی وہاں روانہ ہو جائیں گے۔ نجی خبر رساں ادارے ’’ایکسپریس ٹریبیون‘‘ کے مطابق پارٹی کے اہم رہنماء ندیم نصرت نے الطاف حسین کی روانگی سے متعلق بتایا ہے تاہم انہوں نے یہ نہیں بتایا کہ وہ کیسے اور کب امریکہ جائیں گے۔ الطاف حسین کی امریکہ روانگی کو ’’سیاسی دورہ‘‘ قرار دیا گیا ہے اور تین ہفتے تک امریکہ میں ہی مقیم رہیں جس دوران ان کی اہم حکومتی حکام سے ملاقاتیں بھی متوقع ہیں اور اس کے علاوہ مختلف یونیورسٹیوں میں لیکچر بھی دیں گے۔

الطاف حسین پر لندن میں بیٹھ کر پاکستان میں سیاست کرنے پر پابندی عائد ہے اور حکام ان کی پارٹی کے خلاف مسلسل پیش قدمی کر رہے ہیں۔ ان کے قریبی ساتھی بھی خود کو پارٹی سے علیحدہ کر چکے ہیں اور جبکہ وہ قتل اور بغاوت سمیت متعدد مقدمات میں مطلوب ہیں اور اب انہیں پیسے کی کمی کا بھی سامنا ہے۔ ایم کیو ایم لندن کے ایک ذرائع کا کہنا ہے کہ اس دورے کا مقصد امریکہ کی حمایت حاصل کرنا اور پاکستانی حکومت پر بلاواسطہ دباؤ ڈال کر پاکستان میں جماعت کے وفادار کارکنوں کے خلاف جاری کریک ڈاؤن رکوانے پر زور دینا ہے۔ ہفتے کے روز امریکہ سے برطانیہ پہنچنے پر گفتگو کرتے ہوئے ندیم نصرت نے کہا کہ ’’الطاف حسین کو کافی وقت سے امریکہ سے مسلسل دعوت مل رہی ہے۔ وہاں مقیم پارٹی ورکرز چاہتے ہیں کہ وہ رواں سال کے آخر میں امریکہ آئیں لیکن ان کا دورہ تاخیر کا شکار ہوا ہے۔‘‘ جب ان سے سفر کیلئے الطاف حسین کی صحت سے متعلق پوچھا گیا تو ان کا کہنا تھا کہ وہ سفر کرنے کیلئے مکمل فٹ اور صحت یاب ہیں۔ ایم کیو ایم کے اندرونی ذرائع کے مطابق پارٹی نے فنڈ ریزنگ کی لیکن لندن پیسہ بھجوانے کے تمام راستے بند ہو چکے ہیں۔

مزید : صفحہ اول