جونیئر ڈاکٹرز کو ای ڈی او اور ایم ایس کے عہدوں پر ترقیاں دینے کیخلاف دائر درخواست پر سیکرٹری صحت سے تین نومبر تک تعیناتیوں کی رپورٹ طلب

جونیئر ڈاکٹرز کو ای ڈی او اور ایم ایس کے عہدوں پر ترقیاں دینے کیخلاف دائر ...

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہور ہائیکورٹ کے مسٹر جسٹس محمد قاسم خان نے جونیئر ڈاکٹرز کو ای ڈی او اور ایم ایس کے عہدوں پر ترقیاں دینے کے خلاف دائر درخواست سیکرٹری صحت سے تین نومبر تک تعیناتیوں کی رپورٹ طلب کرتے ہوئے سماعت ملتوی کر دی ہے ۔درخواست گزار پی ایم اے کی جانب سے میاں بلال بشیر ایڈووکیٹ نے عدالت کے روبرو موقف اختیار کیا کہ گریڈ 17اور18کے ڈاکٹرز کو ای ڈی او اور ایم ایس کے عہدوں پر غیر قانونی طور پر ترقیاں دی جا رہی ہیں ۔جو غیر قانونی اقدام ہے جس سے اہل افراد کی حق تلفی ہوتی ہے اور میرٹ پر ہونے کے باوجود انہیں اگلے عہدوں پر ترقی نہیں دی جا رہی ۔گزشتہ روز محکمہ صحت کی طرف سے پیش کردہ رپورٹ میں بتایا گیا کہ محکمہ میں گریڈ19کی 1230آسامیاں خالی ہیں ۔جبکہ عدالتی حکم کے باعث این ٹی ایس ٹیسٹ کے نتائج روک لئے گئے ہیں ۔فاضل عدالت نے حکم دیا کہ آئندہ تاریخ سماعت پر گریڈ 17,18اور19کے ڈاکٹرز کی تعیناتیوں کا ریکارڈ پیش کیا جائے اور اگر تفصیلی رپورٹ پیش نہ کی گئی تو پھر چیف سیکرٹری کو طلب کیا جائے گا ۔

مزید : صفحہ آخر