مہاجروں کو ملازمتوں میں مساوی حصہ دیا جائے،سلیم حیدر

مہاجروں کو ملازمتوں میں مساوی حصہ دیا جائے،سلیم حیدر

کراچی(اسٹاف رپورٹر)مہاجر اتحاد تحریک کے چیئرمین ڈاکٹر سلیم حیدر نے کہا ہے کہ صوبائی حکومت سندھ میں برابری کی سطح پر مہاجر نوجوانوں کو ملازمتوں میں برابری کا حصہ فراہم کریں تاکہ مہاجروں میں پائی جانے والی احساس محرومی کا خاتمہ کیا جاسکے۔ انہوں نے کہاکہ پیپلزپارٹی کی صوبائی اور وفاقی حکومت جب بھی برسراقتدار آتی ہے سندھ میں مہاجر نوجوانوں کو نظرانداز کرتے ہوئے پارٹی کارکنوں اور جیالوں کو میرٹ کیخلاف ورزی کرتے ہوئے ملازمتیں فراہم کرتی ہیں۔ اس مرتبہ بھی وزیراعلیٰ ہاؤس میں اس سلسلے میں سیل قائم کردیا گیا ہے جو وزراء ، اراکین اسمبلی اور پارٹی عہدیداروں کے کوٹے کے مطابق ملازمتیں تقسیم کرے گا۔ اس سے قبل کہ سابق وزیراعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ اسی طرح اپنے لوگوں کو نوازنے کیلئے ملازمتیں تقسیم کرتے رہے۔ خود وزیراعلیٰ سندھ ایک لاکھ 25ہزار ملازمتیں دینے کے دعوے کرتے رہے لیکن وہ کبھی یہ نہیں بتاسکے کہ ان ملازمتوں میں سے 5فیصد ملازمتیں بھی مہاجروں کو دی گئی ہیں۔ اگر اس مرتبہ بھی پیپلزپارٹی نے ہٹ دھرمی اور سابقہ روایت کا مظاہرہ کیا تو پھر اسے بھرپور مزاحمت کا سامنا کرنا پڑے گا۔ انہوں نے کہاکہ اعلیٰ تعلیم یافتہ مہاجر نوجوانوں پرغیراعلانیہ طورپر سرکاری ملازمتوں کے دروازے بند کردیئے گئے اور مہاجر نوجوان یا تو بیروزگار ہیں یا پھر بہت نچلی سطح پر ملازمتیں کرکے اپنا گزر بسر کررہے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ بدقسمتی سے مہاجر قیادت کے دعویداروں نے اپنے ہی مہاجروں پر ظلم اور ستم ڈھائے ہیں ۔ کبھی بھی اسمبلی سے لے کر شاہراہوں تک اس مسئلے پر آواز نہیں اُٹھائی۔ یہی وجہ ہے کہ آج سب سے زیادہ پڑھی لکھی مہاجر قوم کے نوجوان بیروزگاری کے جہنم کا ایندھن بن رہے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ اسٹیبلشمنٹ اور مقتدر حلقے اس صورتحال کا نوٹس لیں۔ خود آرمی چیف جنرل راحیل شریف کرپشن کو دہشت گردی سے جوڑتے رہے ہیں لیکن پیپلزپارٹی کی حکومت برسہا برس سے نوکریوں کی فروخت اور ٹرانسفر و پوسٹنگ پر رشوت وصول کرنے میں ملوث رہی ہے اور اس حوالے سے اربوں روپے کمائے جاچکے ہیں لیکن آج تک کسی کو اس حوالے سے سزا نہیں ملی ہے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر