پیپلزپارٹی کی حکومت کیساتھ ہمیشہ ناانصافی ہوئی: یوسف رضا گیلانی

پیپلزپارٹی کی حکومت کیساتھ ہمیشہ ناانصافی ہوئی: یوسف رضا گیلانی

لیہ(نامہ نگار) پاکستان پیپلز پارٹی نے ہمیشہ آئین اور قانون کا احترام کیا ہے ہم نے اپنے دور اقتدار میں1971کے آئین کو بحال کیا پیپلز پارٹی کے صدر آصف علی ذرداری نے تمام اختیارات پارلیمنٹ کو دے دیے تمام صوبوں کو ان کا حق خودارادیت دیا این ایف سی ایوارڈ کی منصفانہ تقسیم کا اعزاذ بھی میرے دور حکومت کو جاتا ہے سی پیک کے منصوبے کا معاہدا ہمارے دور میں ہواتھا جسے موجودا حکومت متناذعہ بنا کر اسے ناکام کرنا چاہتی ہے بے نظیر برج کا (بقیہ نمبر41صفحہ7پر )

منصوبہ جنوبی پنجاب کا ایک اہم مطالبہ جسے مینے اپنے دور اقتدار میں دیاخیبر پختونخوا ہ صوبے کو اس کی شناخت دی ہم نے پاکستان کی ترقی اور خوشحالی کے لیے بہت سے اقدام اٹھائے پیپلز پارٹی کی حکومت کے ساتھ ہمیشہ نہ انصافی ہوئی ہے ہم نے عدلیہ کے فیصلہ کو ہمیشہ دلی طور پے تسلیم کیا جبکہ موجودہ حکومت ٹس سے مس نئی ہو رہی ملک میں اس وقت انارگی پھیلی ہوئی ہے حکومت کو تشدد کی پالیسی ترک کر کے اپوزیشن کے مطالبات کو کھلے دل سے تسلیم کرنا چاہئے بلاول بھٹو نے جو چار مطالبات رکھے ہیں حکومت عوام اور اپنے آپ سے مخلص ہے تو فوراعملدرآمد کرے یہ بات پاکستان پیپلز پارٹی کے وائیس چیر مین و سابق وزیراعظم سید یوسف رضا گیلانی سے ممبر صوبائی کونسل سردار محمد فاروق اما ن اللہ دریشک کی ملاقات کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کہی انہوں نے کہا کہ ن لیگ کے وزیر اعظم کے لیے اس ملک میں قانون اور ہے اور پیپلز پارٹی کے وزیر اعظم کے لیے اور ہوتا ہے حکومت کو اپنے اداروں کا احترام کرنا چاہئے قومی سلامتی کی خبر لیکس کرنے سے لگتا ہے حکومت اپنے اداروں اور ملک سے نئی ہے،اس موقع پر کلیم اللہ خان دریشک ،راؤ تنزیل احمد، عاصم علیم چوہدری، عبداللہ عامر دریشک ،شفقت اللہ دریشک ،اور شیر باذ دریشک بھی موجود تھے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر