آزادی مارچ میں لاکھوں کی شرکت، حکومت بوکھلاہٹ گئی،انور حیات

آزادی مارچ میں لاکھوں کی شرکت، حکومت بوکھلاہٹ گئی،انور حیات

  



سرائے نورنگ(نمائندہ پاکستان)جے یوآئی(ف)کے رُکن صوبائی اسمبلی حاجی؎ انورحیات خان نے کہاہے کہ آزادی مارچ اسلام آبادمیں لاکھوں کی شرکت سے حکومت بوکھلاہٹ کاشکارہے سلیکٹڈحکومت جانے تک اسلام آبادمیں بیٹھے گے‘ان خیالات کااظہاراُنہوں نے گذشتہ روزاسلام آبادسے صحافیوں سے ٹیلی فونک گفتگوکرتے ہوئے کیااُنہوں نے کہاکہ پاکستانی قوم نے آزادی مارچ اسلام آبادمیں شرکت کرکے حکومت پرواضح کیاکہ پوری قوم جے یوآئی کے شانہ بشانہ کھڑی ہیں اُنہوں نے کہاکہ پاکستان کے عوام کی نظریں اس وقت صرف اور صرف جے یوآئی پر لگی ہوئی ہیں حکومت کی جانب سے ایک پر امن مارچ کو روکنے کے غلطی کی تو اس کا انجام برا ہوگا کارکنان جمعیت نے تحریک کو منطقی انجام تک پہنچانے کا عزم کیا ہے مرکزی قیادت کے فیصلوں کے مطابق اسلام آباد لاک ڈاون تحریک کو کامیاب بنانے کے لئے گھرگھر مہم مکمل کی ہے اور اس سلسلے میں عوام بھی جے یوآئی کے ساتھ بڑھ چڑھ کر جعلی مینڈیٹ کے بل بوتے کٹھ پتلی حکومت کو ختم کرنے پر تلے ہیں اُنہوں نے کہاکہ جے یوآئی کے کارکن اس وقت تک اسلام آبادمیں موجودہوں گے اُنہوں نے کہا کہ نااہل حکومت اسلام آباد کو مقبوضہ کشمیر بنانے کی کوشش کررہی ہے تاہم اُن کوخبردارکرتے ہیں کہ جے یوآئی کے ہوتے ہوئے کوئی مائی کالعل پاکستان میں اغیاروں کاایجنڈامسلط نہیں کرسکتا اُنہوں نے کہاکہ حکومت آزادی مارچ اسلام آبادسے بوکھلاہٹ کاشکارہے یہی وجہ ہے کہ حکومت کی جانب سے مین سڑیم میڈیاپرشدیدپابندعائدکردی گئیں اُنہوں نے حکومت پرتنقیدکرتے ہوئے کہاکہ حکومت عدالتی فیصلوں پرعملدرآمدکرنے کی بجائے اُن کامذاق اُڑارہی ہیں جوکہ توہین عدالت کے زمرے میں آتاہے اُنہوں نے کہاکہ حکومت جلدازجلدمیڈیاپرپابندیاں ہٹائیں اُنہوں نے اعلیٰ عدلیہ سے مطالبہ کیاکہ ٹرانسپورٹ کی پابندی پرازخودنوٹس لیں

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...